پنجاب کی وزیر صحت ڈاکٹر یاسمین راشد کو توہین عدالت کا نوٹس

جہاں سے چاہیں ڈاکٹر بلوالیں، باہر جانے دینے پہ میرا اختیار نہیں ہے۔ یاسمین راشد

فوٹو: فائل

لاہور: سپریم کورٹ نے پنجاب کی وزیر صحت ڈاکٹر یاسمین راشد کو توہین عدالت کا نوٹس جاری کرتے ہوئے پنجاب ہیلتھ کیئر کمیشن کا نیا بورڈ تحلیل کر دیا ہے۔

چیف جسٹس کی سربراہی میں سپریم کورٹ کے خصوصی بینچ نے پنجاب ہیلتھ کیئر بورڈ آف کمیشن کے ارکان کی تقرری کے کیس کی سماعت کی۔

سپریم کورٹ نے ڈاکٹر یاسمین راشد کے علاوہ سیکرٹری صحت اور ایڈیشنل سیکرٹری صحت کو بھی توہین عدالت کے نوٹس جاری کیے ہیں۔

چیف جسٹس سپریم کورٹ جسٹس ثاقب نثار نے ریمارکس دیے کہ پنجاب ہیلتھ کیئر کمیشن کے بورڈ ممبران کی تقرری سپریم کورٹ سے منظوری کے بغیر کی گئی ہے جبکہ سپریم کورٹ نے مجوزہ نام سپریم کورٹ کے سامنے پیش کرنے کا حکم دے رکھا تھا۔

سپریم کورٹ نے وفاقی وزیر صحت،  چیفسیکرٹری صحت اور ایڈیشنل سیکرٹری صحت کو دو روز میں توہین عدالت کے نوٹس کا جواب دینے کا حکم دے دیا ہے۔

سپریم کورٹ نے 17 نومبر کو پنجاب ہیلتھ کیئر کمیشن کا بورڈ تحلیل کرتے ہوئے دو ہفتوں میں نیا بورڈ تشکیل دینے کی ہدایت کی تھی۔

متعلقہ خبریں

ٹاپ اسٹوریز