وفاق تعاون نہیں کر رہا، وزیر اعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ


کراچی: وزیر اعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ نے کہا ہے کہ 18 ویں ترمیم کے لیے ہر حد تک جائیں گے۔ وفاق سندھ حکومت سے کوئی تعاون نہیں کر رہا ہے۔

وزیر اعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ نے سندھ اسمبلی میں خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ینگ ڈاکٹرز کا معاملہ سندھ حکومت ہی حل کرے گی جب کہ وفاقی حکومت نے سوچ لیا ہے کہ ڈاکٹروں کو فارغ کرنا ہے۔

انہوں ںے کہا کہ صحت کا شعبہ صوبائی معاملہ ہے اور صحت میں قانون سازی سے ہمیں کوئی نہیں روک سکتا ہے۔ دعویٰ سب کرتے ہیں لیکن کام کوئی نہیں کرتا ہے تاہم سپریم کورٹ کے فیصلے سے انحراف نہیں ہے۔

وزیر اعلیٰ سندھ نے کہا کہ ادارے سندھ حکومت نے بنائے ہیں اور یہ سندھ کے ہی ہیں جب کہ وفاقی نے ہم سے تینوں اسپتال لے لیے ہیں۔ سیٹلائٹ سینٹر سندھ حکومت کی ملیت ہے جب کہ گزشتہ روز گمبٹ اسپتال کا افتتاح بھی ہم نے کر دیا ہے۔

مراد علی شاہ نے کہا کہ وفاق ہم نے جناح اسپتال اور این آئی سی وی ڈی لے رہا ہے لیکن ہم وفاق سے اپنا حق لیں گے۔ جناح اسپتال کا بجٹ پانچ ارب روپے سے زائد کا ہے جب کہ جناح اسپتال کے ایک چھوٹے سے حصے پر آٹھ کروڑ روپے خرچ ہوتے ہیں اور اس چھوٹے سے حصے کی وجہ سے اسے وفاق کو دینے کا کہا جا رہا ہے۔

وزیر اعلیٰ سندھ نے اسپتالوں کے معاملے پر اپوزیشن سے درخواست کی وہ بھی اس معاملے پر ہمارا ساتھ دیں۔

متعلقہ خبریں

ٹاپ اسٹوریز