بھارت کا ایک اور جھوٹ دنیا کے سامنے آگیا

نئی دہلی: بھارت کا ایک اور جھوٹ دنیا کے سامنے آگیا۔

بھارتی میڈیا نے ابھی نندن کی حوالگی میں تاخیر پروپیگنڈا بے نقاب ہوگیا۔ ابھی نندن کی حوالگی کے وقت آٹھ سے نوبجے کے درمیان بھارت کی درخواست پر طے ہوا۔

ذرائع کے مطابق بھارت ابھی نندن کی حوالگی کے وقت مجموع نہیں چاہتا تھا۔ اسی تناطر میں تقریب منسوخ ہوئی اور بھارتی میڈیا کو کوریج نہیں کرنے دی گئی۔

بھارتی پائلٹ ابھی نندن نے بھارت پہنچتے ہی اپنا بیان بدل دیا

واضح رہے بھارتی پائلٹ ابھی نندن نے بھارت پہنچتے ہی اپنا بیان بدل دیا ہے اورکہا ہے کہ پاکستان میں دوران حراست ذہنی تشدد کا نشانہ بنایا گیا۔

بھارتی ونگ کمانڈر ابھی نندن نے پاکستان سے رہائی کے بعد بھارت پہنچتے ہی بھارتی فضائیہ کے سربراہان سے ملاقات کی۔

ابھی نندن نے پاکستان پر الزام عائد کرتے ہوئے کہا ہے کہ اُسے پاکستان کے حساس ادارے پاس رکھا گیا تھا جہاں اسے دوران حراست ذہنی تشدد کا نشانہ بنایا گیا اور معلومات حاصل کرنے کے لیے ذہنی ٹارچر کا نشانہ بنایا گیا جبکہ بھارتی حکام کے حوالے کرنے میں تاخیر بھی اسی دباؤ کا نتیجہ تھی۔

بھارتی پائلٹ کے مطابق ان پر دباؤ ڈال کر ہی ویڈیو ریکارڈ کی گئی جس میں پاکستان کے حق میں بیان دلوایا گیا۔

واضح رہے کہ پلوامہ واقعہ کے بعد پاک بھارت کشیدگی کے دوران پاکستان نے سرحدی حدود کی خلاف ورزی کرنے پر بھارتی کے دو جیٹ طیارے مار گرائے تھے۔

یہ بھی پڑھیں: بھارتی میڈیا کے ہیرو ابھی نندن کا اپنے دیس میں بے دلی سےاستقبال

پاکستان نے اپنی جوابی کارروائی میں دو پائلٹس زندہ پکڑ لیے تھے جس میں سے بھارتی ونگ کمانڈر ابھی نندن کو دو روز قبل واہگہ بارڈر  بھارتی حکام کے حوالے کر دیا گیا تھا۔

ابھی نندن نے پاکستان میں قید کے دوران کہا تھا کہ وہ پاکستان سے بہت متاثر ہوئے ہیں جب کہ بھارتی میڈیا پاکستان کے خلاف جھوٹا پرپیگنڈا کر کے بھارتی عوام کو گمراہ کرتا ہے۔

دوسری جانب بھارتی میڈیا کی طرف سے جھوٹ پر جھوٹ بول کر پاکستان پر الزامات لگانے کا سلسلہ جاری ہے۔

متعلقہ خبریں