لاہور میں طوفانی بارشیں، شاہی قلعہ کا مرکزی دروازہ گر گیا

لاہور میں طوفانی بارشیں، شاہی قلعہ کا مرکزی دروازہ گر گیا

لاہور: پنجاب کے دارالحکومت میں ہونے والی طوفانی بارشوں سے شاہی قلعہ کے دروازے کا ایک حصہ گر گیا۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق لاہور میں ہونے والے طوفانی بارشوں نے جہاں ایک طرف شہر بھر میں تباہی مچا دی وہیں تاریخی عمارت شاہی قلعہ بھی شدید متاثر ہوا۔ ٹکسالی فوڈ اسٹریٹ کے قریب واقع شاہی قلعہ کا داخلی دروازہ گر گیا۔

مقامی افراد کے مطابق شاہی قلعہ کے داخلی دروازے پر بارش کا پانی مسلسل کھڑے ہونے سے پہلے چھوٹا دروازہ گرا جس کے بعد قلعہ کا بڑا داخلی دروازہ بھی گر گیا۔

والڈ سٹی اتھارٹی کے ترجمان کا کہنا تھا کہ دروازہ بارش کے باعث متاثر ہوا ہے جس کو ازسرنو لگوانے کا کام جلد مکمل کر لیا جائے گا، واضح رہے کہ شاہی قلعہ کی تزئین و آرائش اور عمارت کی مکمل ذمہ داری والڈ سٹی اتھارٹی کی ہے۔

ترجمان والڈ سٹی اٹھارٹی نے روشنائی گیٹ کے منہدم ہونے سے متعلق خبر کو بے بنیاد قرار دیتے ہوئے کہا کہ فوڈ اسٹریٹ کے قریب واقع روشنائی گیٹ بلکل ٹھیک ہے، روشنائی گیٹ کا چھوٹا داخلی دروازہ بارش کے باعث کنڈیوں سے سرک گیا ہے جسے صبح ٹھیک کر دیا جائے گا۔

یہ بھی پڑھیں لاہور میں بارش:وزیر اعلی پنجاب لوگوں کو پانی سے خود نکالتے رہے

لاہور کے شاہی قلعہ کی تاریخ زمانہ قدیم سے جا ملتی ہے لیکن اس کی ازسرنو تعمیر مغل بادشاہ اکبر اعظم نے کرائی تھی جبکہ ان کے بعد آنے والی نسلیں بھی اس کی تزئین  و آرائش کرتی رہیں۔

قلعہ کے اندر واقع چند مشہور مقامات میں شیش  محل، عالمگیری دروازہ، نولکھا محل اور موتی مسجد شامل ہیں۔ 1981 میں یونیسکو نے اس قلعہ کو عالمی ثقافتی ورثہ قرار دیا تھا اور اس وقت سے اس کا شمار بین الاقوامی تاریخی اور ثقافتی مقامات میں ہوتا ہے۔

متعلقہ خبریں

ٹاپ اسٹوریز