ایف اے ٹی ایف ایکشن پلان پر عملدرآمد کیلئے خصوصی یونٹ قائم

پاکستان اور ایف اے ٹی ایف کے درمیان مذاکرات کا تیسرا دور

فنانشل ایکشن ٹاسک فورس (ایف اے ٹی ایف)  کےایکشن پلان پر عملدرآمد کے لیے وفاقی تحقیقاتی ایجنسی (ایف آئی اے) میں خصوصی یونٹ قائم کر دیا گیا ہے۔

ایف آئی اے انسداد دہشت گردی ونگ میں ایف اے ٹی ایف کمپلائنس یونٹ کا نوٹی فکیشن جاری کر دیا گیاہے۔ یہ خصوصی یونٹ ایف اے ٹی ایف ایکشن پلان کے اہداف کے حصول پر اقدامات کا جائزہ لے گا ۔ایف آئی اے کے گیارہ افسر اس یونٹ میں شامل ہوں گے اوریہ  خصوصی یونٹ  کسی بھی ادارے سے ریکارڈ لینے کا مجاز ہو گا۔

واضح رہے کہ فنانشل ایکشن ٹاسک فورس (ایف اے ٹی ایف) نے پاکستان کو رواں سال اکتوبر تک تمام نکات پر عمل درآمد کے لئے آخری مہلت جون کے تیسرے ہفتے میں  دی تھی۔

ہم نیوز کے مطابق ایف اے ٹی ایف کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا ہے کہ پاکستان کے تکنیکی بنیادوں پر کئے گئے اقدامات سے مطمئن ہیں۔

بیان میں کہا گیا کہ پاکستان اکتوبر2019 تک گرے لسٹ میں شامل رہے گا تاہم انہیں ایکشن پلان پرسختی سے عملدرآمد کرنا ہو گا۔

دوسری جانب ترک خبر ایجنسی نے دعویٰ کیا ہے کہ پاکستان نے ایف اے ٹی ایف کی بلیک لسٹ سے بچنے کے لیے تین اہم ممالک جن میں چین، ترکی اور ملائشیاء شامل ہیں، کا تعاون حاصل کر لیا ہے۔

یہ بھی پڑھیے: ایف اے ٹی ایف نے پاکستان کو آخری مہلت دے دی

متعلقہ خبریں

ٹاپ اسٹوریز