وزیراعظم کو آئی ایم ایف کا متبادل منصوبہ پیش کیا تھا، اسد عمر کا انکشاف

وزیراعظم کو آئی ایم ایف کا متبادل منصوبہ پیش کیا تھا، اسد عمر کا انکشاف

اسلام آباد: سابق وزیر خزانہ اسد عمر نے انکشاف کیا ہے کہ انہوں نے وزیراعظم عمران خان کو آئی ایم ایف پروگرام حاصل کرنے کے بجائے متبادل راستہ اختیار کرنے کی تجویز پیش کی تھی لیکن عمران خان نے اسے قبول نہ کیا۔

کراچی اسکول آف بزنس اینڈ لیڈر شپ کی ایک تقریب سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے بتایا کہ مارچ میں وزیراعظم  کو واضح کر دیا تھا کہ آئی ایم ایف کے پاس جانا ایک راستہ ہے مجبوری نہیں۔

انہوں نے کہا کہ متبادل تجاویز میں سرمائے کی عالمی مارکیٹ میں عمران خان کی نیک نامی اور خلیجی ممالک سے پاک فوج کے تعلقات کا فائدہ اٹھانا شامل تھا۔

اسد عمر کے مطابق انہوں نے بطور وزیر خزانہ اپنی سبکدوشی سے ایک ماہ قبل یہ متبادل منصوبہ وزیراعظم کو پیش کیا تھا، عمران خان نے کہا کہ اگرچہ وہ خطروں سے کھیلنے والے شخص ہیں مگر ہر کوئی یہی کہہ رہا ہے کہ ہمیں آئی ایم ایف کے پاس جانا چاہئیے۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق اسد عمر کے پیش کیے گئے متبادل منصوبوں کے تحت سرمایے کی عالمی مارکیٹ اور کمرشل بینکوں سے فنڈز حاصل کرنا شامل تھا، وہ ٹیرف اور نان ٹیرف کی رکاوٹوں کے اطلاق اور روپے کی قدر میں مرحلہ وار کمی اور گھٹا کر آئی ایم سے بچنا چاہتے تھے۔

یہ بھی پڑھیں : اسد عمر نے وزارت خزانہ چھوڑ دی، کوئی عہدہ نہ لینے کا اعلان

یاد رہے کہ 18 اپریل کو ایک ٹویٹ کے ذریعے اسد عمر نے وزارت خزانہ چھوڑنے اور کابینہ میں کوئی بھی عہدہ نہ لیے کا اعلان کیا تھا۔

انہوں نے بتایا کہ وزیراعظم نے انہیں وزارت توانائی سونپنے کی پیشکش کی ہے جسے انہوں نے قبول کرنے سے معذرت کر لی۔

بعد ازاں اسد عمر کو سینیٹ کی قائمہ کمیٹی برائے خزانہ کا چئیرمین تعینات کیا گیا۔

متعلقہ خبریں

ٹاپ اسٹوریز