خیبر پختونخوا کے اسپتالوں میں خواجہ سراؤں کے لیے بیڈز مختص

خیبر پختونخوا کے اسپتالوں میں خواجہ سراؤں کے لیے بیڈز مختص

فوٹو: فائل

پشاور: خیبر پختونخوا حکومت نے سرکاری اسپتالوں میں خواجہ سراؤں کے لیے بیڈز مختص کر دیے۔

خیبر پختونخوا محکمہ صحت کی جانب سے جاری کردہ اعلامیہ کے مطابق سرکاری اسپتالوں میں خواجہ سراؤں کے لیے علیحدہ سے بیڈز مختص کرنے کی ہدایت جاری کر دی گئی ہے۔ جس میں میڈیکل ٹیچنگ اسپتالوں میں خواجہ سراؤں کے لیے 5 بیڈز مختص کیے جائیں گے۔

کیٹیگری اے اور بی میں 4 اور کیٹیگری سی میں 3 بیڈز خواجہ سراؤں کے لیے مختص کیے جائیں گے جبکہ تمام ڈسٹرکٹ ہیلتھ آفیسرز (ڈی ایچ اوز)، میڈیکل سپریٹنڈنٹ (ایم ایس) اور میڈیکل ڈائریکٹرز کو خواجہ سراؤں کے لیے بیڈز مختص کرنے کو یقینی بنانے کا حکم دیا گیا ہے۔

اعلامیہ کے مطابق بیڈز مختص کرنے کے حوالے سے متعلقہ ادارے وزارت انسانی حقوق کو رپورٹ کریں گے۔

یہ بھی پڑھیں قومی ادارہ صحت نے 3خطرناک بیماریوں سے متعلق خبردار کردیا

محکمہ صحت کے مطابق فیصلے سے خواجہ سراؤں کو علاج کی بہتر سہولیات میسر ہوں گی اور صوبے کے خواجہ سراؤں کو ہر اسپتال میں سہولت دینا محکمہ صحت کی ہی ذمہ داری ہے۔

متعلقہ خبریں

ٹاپ اسٹوریز