’تاریخ ہمیشہ عمران خان کو یاد رکھے گی’

’تاریخ ہمیشہ عمران خان کو یاد رکھے گی’

فوٹو: فائل

اسلام آباد: چیئرمین پیپلز پارٹی بلاول بھٹو زرداری نے کہا ہے کہ تاریخ ہمیشہ وزیر اعظم عمران خان کو یاد رکھے گی جس کے دور حکومت میں کشمیر ہم سے چھن گیا۔

چیئرمین پیپلز پارٹی بلاول بھٹو زرداری نے پولی کلینک کے باہر میڈیا سے بات کرتے ہوئے کہا کہ بزدل ہی بزرگوں اور عورتوں کے پیچھے پڑتے ہیں لیکن پیپلز پارٹی کسی بھی حکومتی دباؤ میں نہیں آئے گی۔

انہوں نے کہا کہ لوگ کہتے ہیں سلیکٹڈ کو سلیکٹڈ نہ کہوں تو پھر کیا کہوں ؟ بے غیرت کو بے غیرت نہ کہوں تو پھر کیا کہوں ؟ پیپلز پارٹی پہلے بھی انتقامی کارروائیوں کا سامنا کرتی رہی ہے اور اب بھی کر رہی ہے۔

مسئلہ کشمیر پر بات کرتے ہوئے بلاول بھٹو نے کہا کہ مسئلہ کشمیر پر ہمیں ایک متحد پیغام دینا چاہیے تھا لیکن حکومت مسئلہ کشمیر کو چھوڑ کر سیاسی مخالفین کو نشانہ بنا رہی ہے تاہم حکومت ہماری زبان بند نہیں کرسکتی۔

چیئرمین پیپلز پارٹی نے اپنی پھوپھی فریال تالپور کی صحت سے متعلق بات کرتے ہوئے کہا کہ انہیں آج احتساب عدالت جانا تھا لیکن ان کی صحت کافی خراب ہے اور ڈاکٹرز نے ڈسچارج کرنے سے منع کر دیا ہے۔

انہوں نے کہا کہ فریال تالپور کو انفیکشن ہے جو ڈاکٹرز کے مطابق ایک دو روز میں ختم ہو جائے گا جس کے بعد ان کے دل کا علاج کیا جائے گا۔

واضح رہے کہ فریال تالپور کو گزشتہ روز معدے میں تکلیف کی وجہ سے  پولیس کلینک منتقل کیا گیا تھا جہاں انہیں آفیسر وارڈ میں رکھا گیا ہے اور ان کا علاج جاری ہے تاہم نیب اہلکار انہیں جمعہ کی شام اسپتال سے لے جانے پر بضد تھے۔

نیب کی جانب سے پولی کلینک میں فریال تالپور کے کمرے کو سب جیل قرار دے دیا گیا۔

اس موقع پر بلاول بھٹو زرداری سمیت دیگر رہنما نیئر بخاری، راجہ پرویز اشرف، مصطفیٰ نواز کھوکھر، فیصل کریم کنڈی، پلوشہ خان، چوہدری منظور اور فاروق ایچ نائیک بھی اسپتال پہنچے جبکہ پیپلز پارٹی رہنماؤں نے فریال تالپور کی خرابی صحت پر انہیں اسپتال سے نہ لے جانے کے لیے نیب اہلکاروں کے ساتھ مذاکرات بھی کیے۔

یہ بھی پڑھیں نیب کے تفتیشی افسر کو فریال تالپور کے پالتو کتے نے کاٹ لیا

یاد رہے دو ماہ قبل نیب نے بے نامی اکاؤنٹس کیس میں  فریال تالپور کو گرفتار کیا تھا۔ دو ہفتے قبل انہیں احتساب عدالت میں پیش کیا گیا تھا جہاں ان کا 10 روزہ جسمانی ریمانڈ منظور کر لیا گیا۔

فریال تالپور کو ریمانڈ پورا ہونے پر آج پھر احتساب عدالت میں پیش کیا جانا تھا تاہم طبیعت ناسازی کے باعث انہیں عدالت میں پیش نہیں کیا جا سکا۔

متعلقہ خبریں

ٹاپ اسٹوریز