خیبرپختونخوا میں پہلی بارخاتون رکن اسمبلی کو وزیربنانے کا فیصلہ

عام انتخابات سے قبل خیبرپختونخوا میں سیاسی قلابازیاں عروج پر | humnews.pk

پشاور:خیبرپختونخوا حکومت نے قبائلی اضلاع سے پہلی بارخاتون رکن صوبائی اسمبلی  کو وزیربنانے کا فیصلہ کیا ہے جس کی حتمی منظوری وزیراعظم عمران خان دیں گے۔ 

پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) ذرائع کے مطابق صوبائی کابینہ میں توسیع پر غورجاری ہے۔ قبائلی اضلاع سے نومنتخب پی ٹی آئی کے دو اراکین  کو صوبائی کابینہ کا حصہ بنایا جارہا ہےجن میں ایک خاتون بھی شامل ہو گی۔

دو وزراء کی شمولیت سےوزیر اعلی خیبر پختونخوا محمود خان کی  کابینہ کی تعداد 16ہوجائے گی۔

وزیراطلاعات خیبرپختونخوا شوکت یوسفزئی کے مطابق وزیراعلی محمود خان وزراء کا انتخاب کررہے ہیں تاہم ناموں کا حتمی فیصلہ نہیں ہا۔۔نئے وزرا کی حتمی منظوری وزیراعظم عمران خان خود دیں گے۔

واضح رہے کہ 16اگست کو خبر آئی تھی کہ قبائلی انتخابات کے بعد خیبرپختونخوا کابینہ میں توسیع کرنے اور قبائلی ارکان کو نمائندگی دینے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔

حکمران جماعت پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) ذرائع کے مطابق قبائلی اضلاع کے نو منتخب ارکان میں سے دو کو کابینہ میں شامل کیا جائے گا۔

مزید پڑھیں: سندھ کابینہ میں توسیع کر دی گئی

دو مشیر اور معاون خصوصی کی تقرری بھی زیرغور ہے جس پروزیر اعلیٰ خیبرپختونخوا اور پارٹی قیادت کے درمیان مشاورت جاری ہے۔

یہ بھی پڑھیے: خیبرپختونخوا کابینہ میں توسیع کا فیصلہ

متعلقہ خبریں

ٹاپ اسٹوریز