پرائیویٹ اسکول مالکان کو 24 ستمبر تک چھٹیوں کی فیس لینے سے روک دیا گیا

عدالت نے نجی اسکولز کو موسم گرما کی فیس وصولی سے روک دیا

فوٹو: فائل

پشاور ہائی کورٹ نے پرائیویٹ اسکول مالکان کو 24 ستمبر تک بچوں سے چھٹیوں کی فیس لینے سے روکنے کے احکامات جاری کردیے، عدالت نے صوبائی حکومت اور پرائیویٹ اسکول مالکان سے تمام ریکارڈ طلب کرلیا۔ 

چیف جسٹس پشاور ہائی کورٹ جسٹس وقار احمد سیٹھ کی سربراہی میں دورکنی بنچ نے بچوں سے چھٹیوں کے دورانیے کی فیس لینے کے معاملے  کی  سماعت کی۔

دوران سماعت والدین کی جانب سے وکیل صفائی نے عدالت کو بتایا کہ عدالتی احکامات کے باوجود پرائیوٹ اسکول مالکان بچوں سے فیسیں طلب کررہے ہیں جبکہ فیس نہ ادا کرنے کی صورت میں بچوں کو ہراساں  بھی کیا جارہا ہے۔

عدالت نے بچوں کے والدین کے وکیل کے دلائل  سن کر حکم امتناع میں توسیع کے احکامات جاری کرتے ہوئے واضح کیا کہ کیس کی آئندہ سماعت پر حتمی فیصلہ کیا جائے گا۔

یہ بھی پڑھیے: فیسوں سے متعلق عدالتی فیصلے کے باوجود نجی اسکولوں کی من مانیاں جاری

متعلقہ خبریں

ٹاپ اسٹوریز