شاہ محمود قریشی کا یورپی یونین کے نمائندۂ خصوصی برائے انسانی حقوق سے رابطہ

پاکستان کا بھارت کو جواب اپنے دفاع میں تھا،شاہ محمود

وزیر خارجہ مخدوم شاہ محمود قریشی کا امریکا کے قومی سلامتی کے مشیر ایمبیسڈر جان بولٹن سےٹیلیفونک رابطہ

اسلام آباد: وزیر خارجہ مخدوم شاہ محمود قریشی نے یورپی یونین کے نمائندہ ء خصوصی برائے انسانی حقوق ایمن گلیمور سے ٹیلیفونک رابطہ کیاہے۔

دفترخارجہ کے مطابق  مقبوضہ جموں و کشمیر میں جاری انسانی حقوق کی سنگین خلاف ورزیوں سمیت خطے میں امن و امان کی صورتحال پر تبادلہ کیا گیا۔

وزیر خارجہ نے یورپی یونین کی نمائندہ خصوصی برائے انسانی حقوق کو مقبوضہ جموں و کشمیر میں جاری انسانی حقوق کی سنگین خلاف ورزیوں سے آگاہ کیا۔

اس موقع پر وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے کہاہے کہ پاکستان یورپی یونین کے ساتھ اپنے تعلقات کو انتہائی قدر کی نگاہ سے دیکھتا ہے۔

انہوں نے کہا کہ مقبوضہ جموں و کشمیر کے لوگ 5 اگست سے مسلسل بدترین کرفیو کا سامنا کر رہے ہیں ۔ بھارت کے مقبوضہ جموں و کشمیر میں کئے گئے یکطرفہ ،غیر آئینی اقدامات، بین الاقوامی قوانین اور اقوام متحدہ کی قراردادوں کے منافی ہیں۔

شاہ محمود قریشی نے کہا کہ مقبوضہ جموں و کشمیر میں مسلسل کرفیو کے سبب ، نظام زندگی مکمل طور پر مفلوج ہو کر رہ گئی ہے۔ مقبوضہ جموں و کشمیر میں صورتحال اس قدر تشویشناک ہے کہ انسانی جان بچانے والی ادویات اور خوراک تک میسر نہیں ہو رہی۔

وزیر خارجہ نے کہا بین الاقوامی میڈیا اور انسانی حقوق کی عالمی تنظیمیں ایک نئے انسانی المیے کی نشاندہی کر رہی ہیں ۔

یورپی یونین کے نمائندہ خصوصی برائے انسانی حقوق ایمن گلیمور نے مقبوضہ جموں و کشمیر میں انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں پر بار دگر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ وہ مقبوضہ جموں و کشمیر کی صورتحال پر گہری نظر رکھے ہوئے ہیں۔

یہ بھی پڑھیے: وزیرخارجہ شاہ محمود قریشی کا ایرانی وزیر خارجہ جواد ظریف سے رابطہ

متعلقہ خبریں

ٹاپ اسٹوریز