’نو ڈیل نو کمپرومائز‘ ، وزیراعظم کا دو ٹوک موقف

اسلام آباد: وزیراعظم عمران خان نے کسی بھی قسم کی ڈیل کے امکانات کو ایک بار پھر مسترد کرتے ہوئے کہا ہے کہ کسی سے ڈیل کی جائے گی نا ہی کسی بھی قسم کا سمجھوتہ ہو گا۔

یہ بات انہوں نے پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے رہنما بابر اعوان سے ملاقات کے دوران گفتگو میں کہی۔

وزیراعظم اور بابر اعوان نے ملاقات کے دوران موجودہ ملکی سیاسی صورت حال پر مشاورت کی گئی ساتھ ہی ساتھ حکومت کے آئینی اور قانونی معاملات پر بھی تفصیلی تبادلہ خیال کیا گیا۔

گفتگو میں وزیرعظم عمران خان کا کہنا تھا کہ احتساب کا عمل اسی طرح جاری رہے گا، کیونکہ ملکی تاریخ میں پہلی مرتبہ احتساب کا عمل سیاسی مداخلت سے آزاد ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ احتساب کا عمل شفاف اور بے لاگ ہے۔

مسئلہ کشمیر کے حوالے سے عمران خان کا کہنا تھا کہ میری پوری توجہ کشمیر کاز پر مورکوز ہے, جنرل اسمبلی میں خطاب اہم ہو گا۔

دو رہنماؤں کی ملاقات کے دوران وزیراعظم کے دورہ امریکہ اور سعودی عرب پر بھی مشاورت ہوئی۔

پاکستان تحریک انصاف کے رہنما بابر اعوان کا اس موقع پر کہنا تھا کہ کشمیر کے معاملے پر حکومت کی جارحانہ حکمت عملی درست اقدام ثابت ہوا ہے، وزیراعظم کی کامیاب خارجہ پالیسی کے باعث پہلی بار پوری دنیا میں کشمیر کا مقدمہ سنا گیا۔

بابر اعوان کا مزید کہنا تھا کہ ڈیل کی خبریں پھیلانے والوں کو مایوسی ہو گی، احتساب کا عمل جلد قوم کے سامنے مثبت ثمرات لائے گا۔

متعلقہ خبریں

ٹاپ اسٹوریز