مشاورتی کونسل برائے امور خارجہ کا 9واں اجلاس

اسلام آباد: وزیر خارجہ مخدوم شاہ محمود قریشی کی زیر صدارت مشاورتی کونسل برائے امور خارجہ کا وزارت خارجہ میں 9واں اجلاس ہوا ہے ۔ 

اجلاس میں سیکرٹری خارجہ سہیل محمود، سابقہ خارجہ سیکریٹریز، سفراء، ماہرین بین الاقوامی تعلقات سمیت وزارت خارجہ کے سینیئر حکام نے شرکت کی۔

وزیر خارجہ مخدوم شاہ محمود قریشی  نے شرکاء کو اپنے حالیہ دورہ ء جنیوا اور اس دوران ہونیوالے اعلیٰ سطحی روابط کی تفصیلات سے آگاہ کیا۔

اس موقع پر وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے کہا کہ مقبوضہ جموں و کشمیر کے حوالے سے جاری مشترکہ بیان میں اٹھاون ممالک کی واضح حمایت کا سامنے آنا پاکستان کے لیے اور باالخصوص نہتے کشمیریوں کیلئے بہت اہمیت کا حامل ہے۔

مخدوم شاہ محمود قریشی نے کہا کہ مقبوضہ جموں و کشمیر کے لاکھوں معصوم انسان گذشتہ تینتالیس روز سے بدترین کرفیو کا سامنا کر رہے ہیں، اپوزیشن رہنما غلام نبی آزاد کو مقبوضہ جموں و کشمیر کے کرفیو زدہ علاقوں کے دورے کی اجازت کے حوالے سے بھارتی سپریم کورٹ کا فیصلہ خوش آئند ہے۔

وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے کہا کہ بھارتی سپریم کورٹ کے فیصلے سے پاکستان کے موقف کی توثیق ہوئی ہے۔

اجلاس میں رواں ماہ کے آخری عشرے میں منعقد ہونے والے اقوام متحدہ جنرل اسمبلی کے اجلاس میں مقبوضہ جموں و کشمیر کی صورتحال کو عالمی سطح پر موثر انداز میں اجاگر کرنے کے حوالے سے بھی خصوصی مشاورت کی گئی۔

اجلاس میں مقبوضہ جموں و کشمیر کے نہتے معصوم انسانوں کو بھارتی استبداد سے نجات دلانے کے لیے بین الاقوامی برادری کے ساتھ سفارتی روابط کو مزید فروغ دینے پر بھی اتفاق کیا گیا۔

یہ بھی پڑھیے: مشاورتی کونسل برائے امور خارجہ کا آٹھواں اجلاس

متعلقہ خبریں

ٹاپ اسٹوریز