عشرت العباد کراچی کی سیاست میں دوبارہ متحرک ہونے پر آمادہ

کراچی: متحدہ قومی مومنٹ (ایم کیو ایم) پاکستان اور سابق گورنر سندھ ڈاکٹر عشرت العباد کے درمیان رابطہ ہوا ہے۔

ذرائع نے ہم نیوز کو بتایا کہ میئر کراچی وسیم اختر نے دبئی میں عشرت العباد سے ملاقات کی۔

متحدہ قیادت نے سابق گورنر کو پیغام پہنچایا ہے کہ ایم کیو ایم کو کراچی کے مسائل کے حل کے لئے ان کی ضرورت ہے۔

ذرائع کا مزید کہنا تھا کہ سیاسی تلخی کم کرنے اور ہم آہنگی بڑھانے کے لئے سابق گورنر نے متحرک ہونے پر آمادگی ظاہر کردی ہے۔

ملاقات کے دوران عشرت العباد نے کراچی کے مسائل کے حل کے لیے وسیم اختر کو اپنے مکمل تعاون کی دہانی کرائی اور اس سلسلے میں تجاویز بھی پیش کیں۔

ان کا کہنا تھا کہ مئیر کراچی حکومت سندھ اور وفاق کے ساتھ رابطہ بڑھائیں۔

سابق گورنر سندھ کا کہنا تھا کہ وفاقی حکومت کراچی کے منصوبوں کیلئے فنڈز کی فراہمی میں کردار ادا کرے اور ان کی تکمیل جلد ممکن بنائے۔

ملاقات کے دوران وسیم اختر کا کہنا تھا کہ مسائل حل کرنا ہیں تو سیاسی تلخی، الزامات اور گریبان چاک کرنے کی سیاست ختم کرنا ہوگی۔

سابق گورنر سندھ کی تعریف کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ شہر قائد کے مسائل کے حل کے لیے ماضی کی طرح اب بھی وفاقی، صوبائی اور بلدیاتی حکومتوں کے درمیان رابطے کے لیے عشرت العباد جیسی شخصیت کی ضرورت ہے۔

خیال رہے کہ چند روز قبل عشرت العباد نے پیر صاحب پگارا سے ٹیلی فون پر رابطہ کیا جس میں موجودہ سیاسی صورتحال پر تبادلہ خیال کیا گیا۔

گزشتہ کئی سالوں سے بیرون ملک خاموش زندگی گزارنے والے ڈاکٹر عشرت العباد سب سے زیادہ طویل عرصے تک گورنر سندھ رہنے کا اعزاز رکھتے ہیں۔

ہم نیوز کے مطابق سابق گورنر سندھ ڈاکٹر عشرت العباد نے دبئی سے ٹیلی فون پر پیر صاحب پگارا سے رابطہ کیا جس میں کہا کہ انہوں نے آئین کی شق 149 پر جو مؤقف اختیار کیا ہے وہ جرات مندانہ اور حقیقت پسندانہ ہے۔

ٹیلی فونک بات چیت میں دونوں رہنماؤں نے اس امر پراتفاق کیا کہ  صوبوں کے درمیان مکمل ہم آہنگی وفاق کے استحکام اور قومی یکجہتی کے لیے اشد ضروری ہے۔

متعلقہ خبریں

ٹاپ اسٹوریز