حکومت کو ایک ماہ میں 152 ارب روپے کے پرائز بانڈز واپس مل گئے،سی ڈی این ایس

حکومت کو ایک ماہ میں 152 ارب روپے کے پرائز بانڈز واپس مل گئے،سی ڈی این ایس

اسلام آباد: عوام الناس نے 40 ہزار روپے مالیت والے پرائز بانڈز واپس کرکے رقوم حاصل کرلی ہیں۔ حکومت کی جانب سے جون 2019 سے 40 ہزار روپے مالیت والے پرائز بانڈز کی فروخت پرپابندی عائد کردی گئی ہے البتہ لوگوں کو یہ سہولت دی گئی ہے کہ وہ آئندہ سال مارچ تک اپنے پاس موجود پرائز بانڈز واپس کرکے روپے لے سکتے ہیں۔

مرکزی بنک نےچالیس ہزار روپے کے غیر رجسٹرڈ پرائز بانڈز کی فروخت روک دی

ہم نیوز کے مطابق لوگوں کی جانب سے 31 اگست 2019 تک 152 ارب روپے مالیت کے پرائز بانڈز واپس کیے گئے ہیں۔ یہ اعداد و شمار ڈائریکٹوریٹ آف نیشنل سیونگز(سی ڈی این ایس) کی جانب سے جاری کیے ہیں۔

سی ڈی این ایس حکام کو توقع ہے کہ رواں ماہ کے اختتام تک بانڈز میں سرمایہ کاری کرنے والے 194 ارب روپے مالیت کے 40 ہزارروپے کی مالیت والے پرائز بانڈز واپس کردیں گے۔ اعداد و شمار کے مطابق جولائی اور اگست 2019 کے مہینوں میں بالترتیب 40 اور 112 ارب روپے مالیت کے پرائز بانڈز واپس کیے گئے تھے۔

سیاست دان کروڑوں روپے مالیت کے بانڈز کے خریدار

اسٹیٹ بینک آف پاکستان نے 24 جون2019 کو ایک سرکولر جاری کیا تھا جس میں تمام کمرشل بینکوں کو ہدایات دی گی تھیں کہ وہ 40 ہزار روپے مالیت کے پرائز بانڈز کی فروخت بند کردیں۔ پرائز بانڈز میں سرمایہ کاری کرنے والوں کو سہولت دی گئی ہے کہ وہ 31 مارچ 2020 تک اپنے پاس موجود پرائز بانڈز واپس کرسکتے ہیں۔

متعلقہ خبریں

ٹاپ اسٹوریز