‘فضل الرحمان جیسے لیڈر بچوں کو اپنی سیاست کیلیے استعمال کرتے ہیں’

خوشی ہے پورا پاکستان آج ایک عید منا رہا ہے، فواد چوہدری

فوٹو: فائل

اسلام آباد: وفاقی وزیر برائے سائنس و ٹیکنالوجی فواد چوہدری نے کہا ہے کہ  ‏مدارس کے بچوں کو چارے کے طور پر استعمال کرنے کی تاریخ بہت پرانی ہے، بچوں کو جہاد کے نام پر ملاؤں نے استعمال کیا، سیاست میں ان غریب بچوں کو قربانی کا بکرا بنایا گیا ہے۔

سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر مولانا فضل الرحمان کے احتجاجی مارچ کے حوالے سے بات کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ مولانا فضل الرحمنٰ، لبیک تحریک وغیرہ ایسی سیاسی جماعتیں ہیں جن کے لیڈر ان بچوں کو اپنی سیاست کیلئے استعمال کرتے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ ‏اب فضل الرحمنٰ کی تحریک کے دو بڑے مقاصد ہیں،ایک تو اپنی ذاتی سیاسی حیثیت کی بحالی دوسرا مدرسہ اصلاحات کو روکنا۔

ان کا کہنا تھا کہ اصلاحات کے بعد مدارس ان کے ہاتھ سے نکل جائیں گئے اور وہاں  کے بچے شعور کے نظام میں داخل ہوگئے تو ان کی دکانیں مستقل طور پر بند ہو جائیں گی۔

واضح رہے کہ جمعیت علمائے اسلام ف کے سربراہ مولانا فضل الرحمان نے 27 اکتوبر کو آزادی مارچ کا اعلان کر رکھا ہے۔

یہ بھی پڑھیں ’پی پی پی آزادی مارچ میں شریک نہیں ہوگی‘

مولانا فضل الرحمان نے کہا کہ 27 اکتوبر جس دن کشمیری یوم سیاہ مناتے ہیں، اسی دن کشمیر سے یکجہتی کے ساتھ پورے ملک سے مارچ شروع ہو گا۔ ہم اداروں سے تصادم کی صورتحال پیدا ہونے نہیں دیں گے اور نہ ہی ہم جلد اٹھیں گے۔

متعلقہ خبریں

ٹاپ اسٹوریز