پاکستان اسٹاک ایکسچینج:منافع کی شرح کم کرنے پر ٹریڈرز نےکام بندکردیا

اسٹاک مارکیٹ میں تیزی کا رجحان، 100 انڈیکس میں 282 پوائنٹس کا اضافہ

کراچی: گزشتہ ڈیڑھ ماہ میں پاکستان اسٹاک ایکسچینج (پی ایس ایکس)  میں چھ  ہزارپوائنٹس کا اضافہ ریکارڈ ہوا۔ مارکیٹ میں بہتری آئی لیکن ٹریڈرزنےمنافع کی شرح کم کرنےپرکام بند کردیا اورٹریڈنگ ہال سےباہرآگئے۔

اس ضمن میں نئےقواعدکےتحت شئیرزکی قیمت کی مناسبت سے کميشن ميں تبديلی کردی گئی۔ سیکیورٹی ایکسچینج کمیشن آف پاکستان نےنیانوٹیفکیشن جاری کردیا۔

سیکیورٹی ایکسچینج کمیشن آف پاکستان (اایس ای سی پی) کی طرف سے جاری نوٹیفیکیشن کے خلاف اسٹاک ٹریڈرزنےاحتجاجا کام بند کرتےہوئےہڑتال کردی اورٹریڈنگ ہال سےباہرآگئے۔

ایس ای سی پی کے نئےنوٹیفکیشن کےمطابق  ہرايک سے10روپےکےشيئرپر6پيسے۔۔۔10سے25روپےکےشيئرپر8 پيسےکميشن مقررکرديا گيا۔25 سے50روپےفي شيئر پر 12 پيسے کميشن  ہوگا۔ جبکہ50سے100روپےکےشيئرپر15پيسے کميشن مقررکردياگيا۔

یہ بھی پڑھیے: اسٹاک مارکیٹ کا مثبت آغاز

پاکستان اسٹاک ایکسچینج میں ٹریڈرزکی ہڑتال کےبعد کاروبارمیں مسلسل مندی دیکھی گئی اورانڈیکس 2 سوسےزائد پوائنٹس تک گرگیا جو آغازمیں مثبت پوائنٹس کےساتھ ٹریڈ کررہا تھا۔

متعلقہ خبریں

ٹاپ اسٹوریز