پینٹاگان ڈیجیٹل ماڈرنائزیشن کی 10 ارب ڈالر کی بولی مائیکروسافٹ نے جیت لی

امریکی قومی سلامتی کے ادارے  پینٹاگان کے کمپیوٹرائزڈ سسٹم کو جدید خطوں پر استوار کرنے کے حوالے سے 10 ارب ڈالر کے معاہدے کی بولی مائیکروسافٹ نے جیت لی۔

مائیکروسافٹ سے طے پانے والے کلاؤڈ کمپیوٹنگ معاہدے کا مقصد پینٹاگان کے میدان جنگ اور دور دراز علاقوں سے ڈیٹا جمع کرنے کے حوالے سے فرسودہ اور پرانے کمپیوٹر سسٹم کو جدید خطوں پر استوار کرنا ہے۔

پینٹا گان کی 10 ارب ڈالر کی بولی ایمیزون اور دیگر ٹیکنالوجی کی کمپنیوں سے سخت مقابلے کے بعد مائیکروسافٹ کارپوریشن نے جیت لی۔ تاہم امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی جانب سے بولی میں ایمیزون کی شرکت کی مخالفت کے بعد  معاہدے کا عمل ایک طویل عرصے تک تنازے کا شکار رہا۔

جوائنٹ انٹرپرائز ڈیفنس انفراسٹرکچر کلاؤڈ (جے ای ڈی آئی) معاہدہ پینٹاگان کے وسیع ڈیجیٹل ماڈرنائزیشن کا ایک حصہ ہے جس کا مقصد اسے تیکنیکی طور پر موثر اور فعال بنانا ہے۔

یہ بھی پڑھیں: صدر ٹرمپ کا مواخذہ، امریکی سیاست کا درد سر

ٹیکنالوجی کی بڑی کمپنی اوریکل کارپوریشن نے ایک بیان میں بولی کے عمل پر اپنے تحفظات کا اظہار کیا۔ ایمیزون کے ترجمان نے بولی کے فیصلے پر حیرت کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ مکمل طور پر منصفانہ اور تقابلی پیش کشوں کی صورت میں بولی کے حوالے سے مختلف نتیجہ آسکتا تھا۔

ایمیزون کے ترجمان کا کہنا تھا کہ کمپنی اس بولی اور معاہدے کے عمل کے خلاف احتجاج کرنے کے حوالے سے مختلف پہلوؤں (options) پر غور کر رہی ہے۔

پینٹاگان نے اپنے ایک بیان میں کہا کہ مستقبل میں  وہ اسطرح کے معاہدے بیک وقت بہت ساری کمپنیوں سے کرے گا۔

اگرچہ پینٹاگان دنیا کی سب سے بڑی طاقتور لڑائی قوت ہونے پر فخر کرتا ہے، لیکن اس کا کمپیوٹرائزڈ اور ڈیجیٹل سسٹم بہت حد تک بوسیدہ اور پرانا ہوچکا ہے.

متعلقہ خبریں

ٹاپ اسٹوریز