نواز شریف کو اسٹیرائیڈز دی جا رہی ہیں، مریم اورنگزیب

نواز شریف کو ہوائی سفر کی تیاری کیلئے 48 گھنٹے درکاری ہیں، مریم اورنگزیب

فوٹو: فائل

لاہور: مسلم لیگ ن کی رہنما مریم اورنگزیب نے کہا ہے کہ نواز شریف کی بیرون ملک روانگی کے لیے اسٹیرائیڈز کی ہائی ڈوز دی جا رہی ہے جو بار بار نہیں دی جا سکتی۔

پاکستان مسلم لیگ ن کی ترجمان اور سابق وفاقی وزیر اطلاعات مریم اورنگزیب نے سابق وزیر اعظم نواز شریف کی صحت سے متعلق کہا ہے کہ نواز شریف کی صحت انتہائی خراب ہے اور نواز شریف کی بیرون ملک روانگی کا عمل ایگزٹ کنٹرول لسٹ (ای سی ایل) سے نام نہ نکلنے کے باعث تاخیر کا شکار ہو رہا ہے۔

انہوں نے کہا کہ ڈاکٹرز نے نواز شریف کی پیر کو بیرون ملک روانگی کے لیے انہیں اسٹیرائڈز کی ہائی ڈوز دی ہے اور ڈاکٹرز کے مطابق نواز شریف کو بار بار اسٹیرائیڈز کی ہائی ڈوز نہیں دی جاسکتی ہے۔

مسلم لیگی رہنما نے کہا کہ ڈاکٹرز پلیٹ لیٹس بڑھانے کی کوشش میں ایسا خطرہ مول نہیں لے سکتے جس سے کوئی اور نقصان ہو جائے جبکہ نواز شریف کے پلیٹ لیٹس میں کمی پر ڈاکٹرز کی تشویش بڑھ گئی ہے اور وہ تذبذب کا شکار ہیں۔

انہوں نے کہا کہ ڈاکٹرز کو خدشہ ہے کہ اس دوران کوئی حادثہ نہ ہو جائے اور کسی طبی حادثہ کی صورت میں مریض کو بیرون ملک منتقل کرنا تقریباً ناممکن ہو جائے گا۔ معالجین کے مطابق نواز شریف کے علاج کے لیے ایک ایک لمحہ قیمتی ہے۔ ڈاکٹروں کے مطابق گذرتے وقت کے ساتھ خطرات بڑھتے جا رہے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں سٹیزن پورٹل کو سنجیدہ نہ لینے پر افسران کے خلاف کارروائی کا حکم

مریم اورنگزیب نے کہا کہ ڈاکٹرز کے مطابق نواز شریف کی بیرون ملک روانگی کے عمل کو تیزی سے انجام دینے کی ضرورت ہے اور نواز شریف کے پلیٹ لیٹس کی سطح سفر کے لیے قابل قبول سطح پر لانے کی کوششیں جاری ہیں۔

متعلقہ خبریں

ٹاپ اسٹوریز