مسافر طیارہ رہائشی عمارت پر گرنے سے 15 افراد ہلاک

رہائشی عمارت پر طیارہ گرنے سے 9 افراد ہلاک

فائل فوٹو

قزاقستان میں مسافر طیارہ رہائشی عمارت پر گرنے سے 15 افراد ہلاک اور 66 زخمی ہوگئے ہیں۔

ابتدائی معلومات کے مطابق مسافر طیارے نے الماتےایئرپورٹ سے اڑان بھری تھی جس میں 95 مسافر اور عملے کے 5 افراد سوار تھے۔

قزاقستان کی وزارتِ داخلہ کے مطابق ہلاک ہونے والوں میں چھ بچے بھی شامل ہیں۔ بین الاقوامی ذرائع ابلاغ کے مطابق بچوں سمیت کم از کم 60 زخمی افراد کو زخمی حالت میں مقامی اسپتالوں میں منتقل کیا گیا ہے۔

زندہ بچ جانے والے ایک مسافر نے بتایا کہ مسافر طیارہ اڑنے کے دو منٹ پر لر زنے لگا تھا پھر ایک خوفناک آواز سنائی دی اور جہاز نیچے آگرا۔

مسافر طیارہ آلماتی سے نور سلطان جا رہا تھا۔ بین الاقوامی ذرائع ابلاغ کے مطابق طیارہ مقامی وقت 7 بج کر 22 منٹ پر دو منزلہ عمارت سے ٹکرایا۔

مقامی ذرائع ابلاغ کے مطابق طیارہ اڑان بھرنے کے فوراََ بعد گرگیا۔ واقعہ کی اطلاع ملتے ہی امدادی ٹیمیں جائے وقوعہ پر پہنچی ہیں۔

متاثرین کو ملبے سے نکالنے کیلئے امدادی کارروائیاں جاری ہیں۔ مسافر طیارہ گرنے کی وجوہات فی الحال معلوم نہیں ہو سکیں۔

حکام کا کہنا ہے کہ جہاز کا بلیک باکس ملنے کے بعد ہی حادثے کی وجوہات کا پتا چلایا جاسکے گا۔ خبر ایجنسی کے مطابق جہاز ایک پتھر کے بیریئر سے ٹکرانے کے بعد ایک دو منزلہ عمارت میں جا لگا۔

پاکستان کے وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے قازقستان میں پیش آنے والے طیارہ حادثے پر گہرے دکھ اور افسوس کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ جانی و مالی نقصان پر دل گرفتہ ہیں۔ دکھ کی اس گھڑی میں قازقستان کی حکومت اور عوام کے ساتھ اظہارِ تعزیت کرتے ہیں۔

 

یہ فوری خبر ہے۔ مزید تفصیلات اور معاملے کے درست حقائق جاننے کے لئے اس صفحہ کو ریفریش کریں۔
متعلقہ خبریں

ٹاپ اسٹوریز