سرکاری ملازمین کی تنخواہوں میں ناقابل یقین حد تک اضافے کا امکان

اسلام آباد: سرکاری ملازمین کی تنخواہوں میں ایک لاکھ 64 ہزار روپے تک اضافے کا امکان ہے۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق وفاقی حکومت نے گریڈ ایک سے لے کر 22 تک کے ملازمین کی بنیادی تنخواہوں میں 100 فیصد اضافہ کرے گی۔

رپورٹس کے مطابق ڈاکٹر عشرت حسین کی وفاقی سروس تشکیل نو کمیٹی نے ملازمین کی تنخواہوں اور مراعات کے حوالے سے کیے جانے والے امتیاز کو ختم کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق ردوبدل 2017 میں لاگو ہونے والے تنخواہوں کے اسکیل کے تحت کیا جائے جبکہ مدت ملازمت اور گریڈ کے حساب سے تنخواہیں بڑھائی جائیں گی۔

فیصلے کے مطابق گریڈ 1 کے ملازمین کی تنخواہوں میں نو سے 17 ہزار کے درمیان اضافہ کیا جائے گا جبکہ گریڈ 2 کے ملازمین کی تنخواہیں نو ہزار 300 سے لیکر کے 19 ہزار کے درمیان بڑھیں گی۔

اسی طرح گریڈ 3 کے ملازمین کی کم از کم 9 ہزار 640 جبکہ زیادہ سے زیادہ 21 ہزار 310 روپے جبکہ گریڈ 4 کے ملازمین کیلئے کم سے کم تنخواہ نو ہزار جبکہ زیادہ سے زیادہ 23 ہزار ایک سو روپے اضافہ کیا جائے گا۔

میڈیا رپورٹس میں انکشاف کیا گیا کہ گریڈ 5 کے ملازمین کیلئے کم از کم تنخواہ میں 10260 روپے جبکہ زیادہ سے زیادہ 25260 روپے، گریڈ 6 کے ملازمین کیلئے کم از کم تنخواہ میں 10620 روپے جبکہ زیادہ سے زیادہ 27240 روپے، گریڈ 7 کے ملازمین کیلئے کم از کم تنخواہ میں 10990 روپے جبکہ زیادہ سے زیادہ 29290 روپے اضافہ کیا جائے گا۔

مزید پڑھیں: سرکاری ملازمین کی تنخواہوں میں اضافے کا نوٹیفیکیشن جاری

وفاقی حکومت گریڈ 8 کے ملازمین کیلئے کم از کم تنخواہ میں 11380 روپے جبکہ زیادہ سے زیادہ 31480 روپے، گریڈ 9 کے ملازمین کیلئے کم از کم تنخواہ میں 11770روپے جبکہ زیادہ سے زیادہ 31480 روپے اضافہ کرے گی۔

گریڈ 10 کے ملازمین کیلئے کم از کم تنخواہ میں 12160روپے جبکہ زیادہ سے زیادہ 36160روپے،گریڈ 11 کے ملازمین کیلئے کم از کم تنخواہ میں 12570روپے جبکہ زیادہ سے زیادہ 38970روپے، گریڈ 12 کے ملازمین کیلئے کم از کم تنخواہ میں 13320روپے جبکہ زیادہ سے زیادہ 42120 روپے اضافہ کیا جائے گا۔

رپورٹس میں بتایا گیا کہ گریڈ 13 کے ملازمین کیلئے کم سے کم تنخواہ میں 14260 روپے جبکہ زیادہ سے زیادہ 45760 روپے، گریڈ 14 کے ملازمین کیلئے کم از کم تنخواہ میں 15180روپے جبکہ زیادہ سے زیادہ 50280روپے، گریڈ 15 کے ملازمین کیلئے کم از کم تنخواہ میں 16120روپے جبکہ زیادہ سے زیادہ 56020 روپے اضافہ کیا جائے گا۔

وفاقی حکومت گریڈ 16 کے ملازمین کیلئے کم از کم تنخواہ میں 18910روپے جبکہ زیادہ سے زیادہ 64510 روپے، گریڈ 17 کے ملازمین کیلئے کم از کم تنخواہ میں 30370 روپے جبکہ زیادہ سے زیادہ 76370روپے، گریڈ 18 کے ملازمین کیلئے کم از کم تنخواہ میں 38350 روپے جبکہ زیادہ سے زیادہ 95750 روپے اضافہ کرے گی۔

اسی طرح گریڈ 19 کے ملازمین کیلئے کم از کم تنخواہ میں 59210روپے جبکہ زیادہ سے زیادہ 120210روپے، گریڈ 20 کے ملازمین کیلئے کم از کم تنخواہ میں 69090 روپے جبکہ زیادہ سے زیادہ 132230روپے، گریڈ 21 کے ملازمین کیلئے کم از کم تنخواہ میں 76270روپے جبکہ زیادہ سے زیادہ 146720روپے اضافہ ہوگا۔

سب سے زیادہ اضافہ گریڈ 22 کے ملازمین کیلئے کم سے کم 82380 روپے جبکہ زیادہ سے زیادہ 1 لاکھ 64 ہزار 560 روپے تک کا ہوگا۔

متعلقہ خبریں

ٹاپ اسٹوریز