شام میں فضائی حملہ، 33 ترک فوجی جاں بحق

ادلب: شام کے شمالی مشرقی علاقے میں حکومتی فوج کے فضائی حملے کے نتیجے میں 33 ترک فوجی ہلاک ہو گئے ہیں۔

برطانوی نشریاتی ادارے بی بی سی کے مطابق ترک حکام نے فوجیوں کی ہلاکتوں کی تصدیق کرتے ہوئے بتایا ہے کہ ترکی شامی فوج کے اہداف کے خلاف جوابی کارروائی کر رہا ہے۔

مزید پڑھیں: شام: جنگجوؤں کے قافلے پر فضائی حملے میں 8 ہلاک

روس کی حمایت یافتہ شامی فوج ادلب کو باغیوں سے چھڑانے کی کوشش کر رہی ہیں جنھیں ترک فوج کی حمایت حاصل ہے۔ شامی حکومت نے ادلب کی تازہ ترین صورتحال کے حوالے سے اب تک کوئی ردعمل نہیں دیا۔

دوسری جانب ترک صدر رجب طیب اردوگان نے اعلی سطحی سیکیورٹی اجلاس طلب کیا تھا جس کے فوری بعد ترک فوج نے شامی اہداف کو نشانہ بنانا شروع کر دیا ہے۔

ترکی کی جانب سے یہ موقف سامنے آیا ہے کہ شام کی سرکاری فوج ان علاقوں سے پیچھے ہٹ جائیں جہاں ترکی نے چوکیاں قائم رکھی ہیں اور اس سے قبل یہ دھکمی بھی دی گئی تھی کہ اگر شامی فوج کی پیش قدمی نہیں رکی تو ان پر حملہ کر دیا جائے گا۔

متعلقہ خبریں

ٹاپ اسٹوریز