’پاکستان میں خود کو دنیا کے کسی بھی ملک سے زیادہ محفوظ خیال کرتا ہوں’

شین واٹسن نے پی ایس ایل2020 کیلئے رجسٹریشن کرادی

فائل فوٹو

اسلام آباد: کوئٹہ گلیڈی ایٹرز کے کھلاڑی اور سابق آسٹریلوی کرکٹر شین واٹسن نے کہا ہے کہ میں پاکستان میں خود کو دنیا کے کسی بھی ملک سے زیادہ محفوظ خیال کرتا ہوں۔

ایک ویب سائٹ کو دیے گئے انٹرویو میں سابق آل راؤنڈر کا کہنا تھا کہ میرے لیے پاکستان کا دورہ ہمیشہ خوشگوار تجربہ رہا ہے، صرف کراچی اور دیگر شہروں میں ہی نہیں بیرون ملک بھی پاکستانی شائقین بڑا پیار دیتے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ بچوں کے اسکول کا مسئلہ نہ ہوتا تو اس بار فیملی بھی ساتھ آتی، میرے گھر والے یہاں کی سیکیورٹی صورتحال سے مطمئن ہیں۔

یہ بھی پڑھیں: کوئٹہ گلیڈی ایٹرز کو بڑا دھچکہ، عمر اکمل پی ایس ایل سے باہر

ان کا کہنا تھا کہ پی ایس ایل ایک مشکل ٹورنامنٹ ہے جس میں تیز گیند بازی کا معیار بہترین ہے، ہر میچ میں ایک یا دو ایسے باولرز کا سامنا ضرور کرتا ہوں جو 150 کلومیٹر کی رفتار سے گیند بازی کرتے ہیں۔

واٹسن کا کہنا تھا کہ کوئٹہ گلیڈی ایٹرز کی طرف سے کھیلنے پر بہت خوش ہوں، تمام کھلاڑی ٹیم کی بہتری اور کامیابی کے لیے اپنا کردار ادا کرتے ہیں۔

یہ پڑھیں:شین واٹسن نے پی ایس ایل2020 کیلئے رجسٹریشن کرادی

ان کا مزید کہنا تھا کہ اعظم خان، نسیم شاہ اور محمد حسنین بہترین نوجوان کھلاڑی ہیں، اعظم میں میچ کے مطابق اننگز کھیلنے کی صلاحیت موجود ہے۔

انہوں نے کہا کہ اس ٹورنامنٹ میں اپنی کارکردگی سے مطمئن ہوں، بس اگلے میچز میں کوشش کروں گا کہ رن آؤٹ نہ ہو سکوں۔

متعلقہ خبریں

ٹاپ اسٹوریز