ڈینیل پرل کیس:’آئندہ ہفتہ سپریم کورٹ میں اپیل دائر کی جائے گی’

اسلام آباد: وزیر داخلہ اعجاز شاہ نے کہا ہے کہ وفاقی حکومت ڈینیل پرل کیس میں سندھ ہائی کورٹ کے فیصلے سے آگاہ ہے، فیصلے کے خلاف آئندہ ہفتے اپیل سپریم کورٹ میں اپیل دائر کی جائے گی۔

ایک بیان میں انہوں نے کہا کہ وفاقی حکومت نے فیصلے پر تشویش کا اظہار کیا ہے۔ فوجداری مقدمات کے تناظر میں اگرچہ یہ ایک صوبائی معاملہ ہے، اسی تناظر میں سندھ کی حکومت کے ساتھ بھی معاملہ اٹھایا گیا ہے۔

مزید پڑھیں: ڈینیئل پرل کیس: پاکستان کے اپیل کرنے کے فیصلے کا خیر مقدم کرتے ہیں، امریکہ

وزارت داخلہ نے کہا کہ سندھ حکومت نے فیصلے کے خلاف اپیل دائر کرنے کا فیصلہ کیا۔ وفاق نے سندھ حکومت کو انصاف کے تمام تقاضے پورے کرنے کیلئے کہا ہے۔

انہوں نے کہا وفاقی حکومت نے سندھ حکومت کو اپیل دائر کرنے سے متعلق وسائل استعمال کرنے کا کہا۔ سندھ کی حکومت کومعاملہ پر اٹارنی جنرل پاکستان سے بھی مشاورت کرنے کا کہاگیا ہے۔

وزارت داخلہ نے کہا کہ اپیل دائر ہونے کا عمل مکمل ہونےتک تمام ملزمان کے خلاف نقص عامہ کے قانون کے تحت مقدمہ درج کیا گیا ہے۔ تمام ملزمان کواپیل دائر ہونے تک تین ماہ کے لیے نظربند کیا گیاہے۔

اعجاز شاہ نے کہا کہ وزارت داخلہ دہشت گردوں کو منطقی انجام تک پہنچانے کیلئے قانونی ضابطے پورے کرنے کیلئے پرعزم ہے۔

خیال رہے کہ سندھ ہائی کورٹ نے 2 اپریل2020 کو امریکی صحافی کے قتل میں نامزد تین ملزمان کی رہائی کا حکم دیا تھا اور ایک ملزم احمد عمر شیخ کی سزائے موت کو 7 سال قید میں تبدیل کیا تھا۔

متعلقہ خبریں

ٹاپ اسٹوریز