امریکہ رواں برس کے آخر تک کورونا ویکسین تیار کرلے گا، صدر ٹرمپ


واشنگٹن: امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے دعویٰ کیا ہے کہ امریکہ رواں برس کے آخر تک کورونا وائرس کے علاج کے لیے ویکسین تیار کر لے گا۔

ڈونلڈ ٹرمپ نے کہا کہ سال کے آخر تک ویکسین کی تیاری کے لیے ہم مطمئن اور کوشاں ہیں۔

ان کا یہ بھی کہنا تھا کہ میں اسکول اور یونیورسٹیوں کو ستمبر سے دوبارہ سے کھولنے پر زور دوں گا۔

امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کا کہنا تھا کہ کسی ملک نے ویکسین کی تیاری میں امریکی ماہرین کوشکست دی تو خوشی ہوگی۔

دوسری جانب کورونا وائرس کے سبب دنیا بھر میں ہلاکتوں کی تعداد 2 لاکھ 48 ہزار سے بڑھ گئی جبکہ 35 لاکھ 66 ہزارسے زائد افراد متاثر ہو چکے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں: کورونا وائرس، امریکہ کی 7 ریاستیں مل کر طبی سامان خریدیں گی

دنیا بھر میں کورونا سے متاثرہ افراد میں سے 11 لاکھ 54 ہزار سے زائد افراد صحت یاب بھی ہو چکے ہیں۔

امریکہ میں کورنا وائرس سے مزید ایک ہزار 735 افراد موت کے منہ میں چلے گئے جس کے بعد امریکہ میں اموات کی تعداد 68 ہزار 598  سے تجاوز کر گئی ہے۔

امریکہ میں متاثرہ افراد کی تعداد 11 لاکھ 88 ہزار سے زائد ہو گئی ہے جبکہ صحتیاب ہونے والوں کی تعداد ایک لاکھ  78  ہزار 2 سو سے زائد ہو گئی۔

برطانیہ میں کورونا سے مزید 315 افراد کی موت کے بعد اب تک مرنے والوں کی تعداد 28 ہزار 400 سے تجاوز کر گئی جبکہ متاثرہ افراد کی تعداد ایک لاکھ  86 ہزار سے زائد ہے۔

اسپین میں بھی گزشتہ 24 گھنٹے کے دوران مزید 164 افراد کی اموات کے بعد اب تک ہلاک ہونے والے افراد کی تعداد 25 ہزار 200 سے زائد ہے اور متاثرہ افراد کی تعداد 2 لاکھ 47 ہزار سے بڑھ گئی ہے۔

اٹلی میں کورونا وائرس نے مزید 174 افراد کی جان لے لی جہاں اب تک ہونے والی اموات 28 ہزار 884 ہو گئیں۔ اٹلی میں کورونا سے متاثرہ افراد کی تعداد 2 لاکھ 10 ہزار سے زائد ہے۔

یہ بھی پڑھیں: کورونا: دنیا بھر میں متاثرہ افراد کی تعداد 35 لاکھ 66 ہزار سے بڑھ گئی

فرانس میں بھی کورونا نے مزید 135 افراد کی جان لے لی۔ فرانس میں مرنے والوں کی تعداد 24 ہزار 800 سے زائد ہو گئی اور متاثرہ افراد کی تعداد ایک لاکھ 68 ہزار سے تجاوز کر گئی۔

جرمنی میں بھی کورونا سے اموات کا سلسلہ جاری ہے اب تک ہونے والی اموات کی تعداد 6 ہزار 840 سے بڑھ گئی ہے جب کہ کورونا کے مریضوں کی تعداد 1 لاکھ 65 ہزار سے تجاوز کر گئی ہے۔

متعلقہ خبریں

ٹاپ اسٹوریز