علاقائی پروازوں پر پابندی برقرار

اسلام آباد: کورونا کے خدشے کے پیش نظر حکومت نے علاقائی پروازوں پر پابندی برقراررکھنے کا فیصلہ کیا ہے۔

قومی رابطہ کمیٹی کے اجلاس کے بعد سول ایوی ایشن نے ڈومیسٹک پروازوں کی بندش میں مزید 3 دن کی توسیع کردی ہے۔

ترجمان سول ایوی ایشن کے مطابق ڈومیسٹک پروازیں 10 مئی رات 12 بجے تک بند رہیں گی۔

ترجمان سول ایوی ایش کے مطابق 7 مئی تک ڈومیسٹک پروازوں پر پہلے ہی پابندی عائد تھی۔خصوصی  پروازوں اور چارٹرڈ طیاروں کو پابندی سے استثنیٰ حاصل ہے.

گزشتہ روز وفاقی وزیر برائے ہوا بازی غلام سرورخان نے کہا تھا کہ نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سینٹر(این سی او سی) میں ڈومیسٹک پروازیں کھولنے کی سفارش کی ہے تاہم اس حوالے سے حتمی فیصلہ قومی رابطہ کمیٹی پر چھوڑ دیا ہے۔

این سی او سی اجلاس میں اندرون ملک فضائی آپریشن شروع کرنےکی سفارش کی گئی تھی جس میں ہوا ہازی، این ڈی ایم اے، محکمہ صحت، چاروں وزرائےاعلیٰ نےشرکت کی۔

مزید پڑھیں: وزیراعظم عمران خان سے پاکستان اور برطانیہ کے درمیان خصوصی پروازیں چلوانے کا مطالبہ

وفاقی وزیر برائے ہوا بازی غلام سرورخان نے بتایا تھا کہ ابتدائی طور پر اسلام آباد، لاہور، کراچی اور کوئٹہ سے پروازیں شروع ہوں گی۔۔

ان کا کہنا تھا کہ وزیراعظم نےشعبہ تعمیرات اورزراعت سمیت ان سےمتعلقہ کاروبارکھولنےکی اجازت دی ہے۔ اب ہم اس پوزیشن میں ہیں کہ اندرون ملک فضائی آپریشن شروع کیا جا سکے۔

یاد رہے کہ حکومت پاکستان نے کورونا وائرس سے بچاؤ کے لیے بین الاقوامی پروازوں کی منسوخی کے بعد  ساتھ ساتھ تمام علاقائی پروازیں بھی منسوخ کردی تھیں۔

اس سے قبل اسلام آباد میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے  وزیر منصوبہ بندی اسد عمر نے کہا تھا ملک میں دکانیں سحری سے شام 5 بجے تک کھلی رہیں گی جبکہ رات کو دکانیں مکمل بند رہیں گی۔ تمام چھوٹے کاروبار اور دکانیں ہفتے میں 2 دن بند کیے جائیں گے۔

انہوں نے کہا تھا کہ  وزیراعظم یا حکومتی فیصلوں کا مقصد صرف عوام کوآسانی فراہم کرنا ہے۔ ملک میں لاکھو ں افراد مجبور ہیں۔

وفاقی وزیر اسد عمر نے کہا کہ وفاق اور صوبوں کے دست و گریبان ہونے کی باتیں بے بنیاد ہیں۔ آج تک جتنے بھی فیصلے ہوئے صوبوں کی مشاور ت سے ہوئے ہیں۔

متعلقہ خبریں

ٹاپ اسٹوریز