دنیا کے ممالک سفری پابندیاں ختم کرنے کی کوشش کریں، جی ٹوئنٹی اجلاس کا مطالبہ

ریاض: سعودی عرب کی زیر صدارت گروپ آف ٹوئنٹی (جی 20) ممالک کے وزرائے تجارت کے اجلاس میں کہا گیا ہے کہ تمام ممالک سفری پابندیاں ختم کرنے کی کوشش کریں۔

جی ٹوئنٹی کے وزرائے تجارت و سرمایہ کاری نے سعودی عرب کی صدارت میں آن لائن اجلاس کے اختتام  پر مشترکہ بیان جاری کیا ہے جس کے مطابق وزرائے تجارت و سرمایہ کاری نے مطالبہ کیا کہ زرعی غذائی اشیا کی برآمد پر کسی طرح کی کوئی پابندی نہ لگائی جائے۔

وزرائے تجارت نے اس عزم کا اظہار کیا کہ کورونا وائرس کی وبا سے پیدا ہونے والے مسائل سے مل کر نمٹا جائے گا۔ تجارت اور سرمایہ کاری پر کورونا کی وبا کے اثرات کم کرنے کے لیے ٹھوس بنیادوں پر اقدامات کیے جائیں گے۔

وزرائے تجارت نے دو طرح کے حفاظتی انتظامات کا عزم ظاہر کیا ہے۔ اول تو وبا کے اثرات کم کرنے کے لیے مختصر مدت کے اقدامات کیے جا ئیں گے، دوم ڈبلیو ٹی او اور کثیر فریقی تجارتی نظام میں ضروری اصلاحات لانے کے لیے طویل مدتی اقدامات کرنے ہوں گے۔

جاری پریس ریلیز کے مطابق وزرائے تجارت نے عالمی تجارت و سرمایہ کاری اور بین الاقومی امدادی سامان کی ترسیل پر وبا کے اثرات سے نمنٹے کے لیے عالمی تنظیموں کے ساتھ مل کر کوششوں کا عزم ظاہر کیا۔

مزید پڑھیں: کورونا وائرس کا خدشہ، مختلف ممالک کا سفری پابندیاں سخت کرنے کا فیصلہ

وزرائے تجارت نے بیان میں امدادی سامان کی ترسیل، طبی ساز وسامان اور کورونا وائرس سے متعلق ضروری خدمات پر عائد پابندیوں سے نمنٹے کا بھی عزم ظاہر کیا اور کہا کہ اس قسم کی پابندیاں، عارضی شفاف اور متوازن ہوں تمام ممالک بین الاقوامی سفر پر عائد پابندیاں ختم کرنے کی کوشش کریں اور جی ٹونٹی میں شامل وزرائے مواصلات بری، بحری اور فضائی نقل و حرکت کو بہتر بنا ہیں اور مسافر بردار طیاروں کو سامان برداری میں تبدیل کرکے ائیر کارگو میں زیادہ سے زیادہ گنجائش پیدا کی جائے۔

متعلقہ خبریں

ٹاپ اسٹوریز