چیئرپرسن ایف بی آر نوشین جاوید کو عہدے سے ہٹادیا گیا، جاوید غنی نئے چیئرمین تعینات

اسلام آباد: وفاقی حکومت نے چیئرپرسن ایف بی آر نوشین جاوید کو عہدے سے ہٹادیا اور ان کی جگہ جاوید غنی کو نیا چیئرمین تعینات کردیا۔

ہم نیوز کے مطابق وفاقی کابینہ نے نئے چیئرمین ایف بی آرجاوید غنی کی تعیناتی کی باقاعدہ منظوری دے دی ہے۔ نئے چیئرمین ایف بی آر جاویدغنی کی تعیناتی سے متعلق نوٹیفکیشن جاری کردیا گیا۔

وفاقی کابینہ نے سابق چیئرپرسن ایف بی آر نوشین جاوید کو ہٹانے کی بھی منظوری دے دی۔ نوشین جاوید کو وفاقی سیکریٹری برائے ثقافت تعینات کردیا گیا۔

مزید پڑھیں: ایف بی آر نے شناختی کارڈ پرخریداری کی حد ایک لاکھ مقرر کردی

خیال رہے کہ 6 اپریل کو وفاقی حکومت نے ان لینڈ ریونیو سروس کی گریڈ 22 کی افسر نوشین جاوید امجد کو سابق چیئرمین شبر زیدی کی جگہ چیئرپرسن ایف بی آر تعینات کر دیا تھا۔

وفاقی حکومت نے شبر زیدی کی اعزازی طور پر چئیرمین تقرری فوری طور پر ختم کردی تھی۔ شبرزیدی پہلے سے ہی غیر معینہ مدت کیلئے رخصت تھے۔

شبرزیدی کی رخصت کے باعث نوشین جاوید امجد قائمقام چیئر پرسن کام کررہی تھیں اور بعد میں انہیں ریگولرطور پر چیئرمین ایف بی آر لگا دیا گیا تھا۔ نوشین جاوید کو ممبر ایڈمن ایف بی آر سے تبدیل کرکے چئیرمین ایف بی آر لگا دیا گیا تھا۔

خیال رہے کہ پانچ ماہ قبل شبر زیدی نے بطور چیئر مین فیڈرل بورڈ آف ریونیو (ایف بی آر) کام جاری رکھنے سے معذرت کر لی تھی۔ ہم نیوز کے رابطہ کرنے پر شبر زیدی نے واضح کیا تھا کہ انہوں نے استعفیٰ نہیں دیا ہے۔

وزیراعظم عمران خان نے بھی ایک اجلاس میں تذکرہ کیا تھا کہ شبر زیدی شدید بیمار ہیں، بطور چیئرمین ایف بی آر کے لیے نیا بندہ لائیں گے۔ عمران خان نے کہا تھا کہ شبر زیدی میری درخواست پر صرف چھ ماہ کے لیے آئے تھے۔

متعلقہ خبریں

ٹاپ اسٹوریز