بدعنوان عناصر سے 466 ارب روپے برآمد کر کے قومی خزانہ میں جمع کرائے، چیئرمین نیب

پی اے سی کی ذیلی کمیٹی کے کنوینئر چیئرمین نیب کی عدم موجودگی پر برہم

فوٹو: فائل

اسلام آباد: قومی احتساب بیورو (نیب) کے چیئرمین جاوید اقبال نے کہا ہے کہ نیب نے بدعنوان عناصر سے 466 ارب روپے برآمد کر کے قومی خزانہ میں جمع کرائے ہیں۔

اپنے بیان میں ان کا کہنا تھا کہ نیب کی اولین ترجیح میگا کرپشن کیسز مقدمات کو منطقی انجام تک پہنچانا ہے،  نیب ملک سے بدعنوانی کے خاتمہ اور کرپشن فری پاکستان کے لیے کوشاں ہے۔

انہوں نے کہا کہ مفرور اور اشتہادی ملزمان کی گرفتاری کےلیے قانون کے مطابق اقدامات کئے جائیں گے ،قانون اپنا راستہ خود بنائے گا ، نیب وائٹ کالر کرائمز اور میگا کرپشن کیسز کو منطقی انجام تک پہنچائے گا۔

نیب نے نواز شریف، شہباز شریف، سرتاج عزیز کے خلاف تحقیقات کی منظوری دے دی

چیئرمین نیب نے کہا کہ نیب کا ایمان کرپشن فری پاکستان ہے، نیب اقوام متحدہ کی بدعنوانی کے خلاف کنونشن کے تحت فوکل پرسن ہے،پاکستان نے یو این سی اے سی پر دستخط کر رکھے ہیں۔

ان کا مزید کہنا تھا کہ عالمی اقتصادی فورم، ٹرانسپیرنسی انٹرنیشنل اور پلڈاٹ نے نیب کی کوششوں کی تعریف کی ہے۔

انہوں نے بتایا کہ نیب کو 2019 میں 53 ہزار سے زائد شکایات موصول ہوئی ہیں، نیب نے موصول شکایات میں سے 42 ہزار 760 کو نمٹا دیا ہے۔

متعلقہ خبریں

ٹاپ اسٹوریز