اسٹاک ایکسچینج میں 434 پوائنٹس کا اضافہ

پی ٹی آئی کے دورر حکومت میں اسٹاک مارکیٹ کی کارکردگی کیا رہی؟

فائل فوٹو

کراچی: پاکستان اسٹاک ایکسچینج میں کاروباری ہفتے کے چوتھے روز 434 پوائنٹس اضافے کے ساتھ کاروبارکا اختتام ہوا۔

اسٹاک مارکیٹ میں  100انڈیکس 39270پوائنٹس کی سطح پربند ہوا۔

دوسری جانب  فاریکس ڈیلرز کے مطابق انٹر بینک میں ڈالرکی قیمت میں 20 پیسے اضافہ کے بعد ڈالر166.98 روپے پر بند ہوا۔

دریں اثناء کراچی کے صرافہ بازار میں فی تولہ سونےکی قیمت ایک لاکھ 22ہزار750روپے پرمستحکم رہی۔ 10گرام 24 قیراط سونےکی قیمت105238روپے پرمستحکم رہی۔

خیال رہے کہ  معاشی تھنک ٹینک کے اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے وزیراعظم کا کہنا تھا کہ کورونا نے پاکستان سمیت عالمی معیشت پر منفی اثرات مرتب کیے ہیں۔

مزید پڑھیں: کورونا کا معیشت پر شدید دباو، 7 دہائیوں میں پہلی بار قومی ترقی کی شرح منفی میں چلی گئی

وزیراعظم عمران خان کا کہنا تھا کہ حکومت کی پالیسی وبا سے عوام کا تحفظ اور اقتصادی سرگرمیوں کے درمیان توازن ہے۔ معاشرے کے انتہائی پسماندہ طبقات کو امداد کی فراہمی اولین ترجیح ہے۔

وزیراعظم نے کہا کہ غربت کے خاتمے کے لیے حکومت کا احساس پروگرام کلیدی اہمیت کا حامل ہے۔ انتہائی مستحق افراد کی مدد کے لیے احساس پروگرام میں توسیع کی ضرورت ہے۔

انہوں کا کہنا تھا کہ تعمیراتی شعبے میں راعات کا مقصد روزگار کے مواقع پیدا کرنا ہے۔ حکومت غریب عوام کو سستی رہائش فراہم کرنا چاہتے ہے۔

متعلقہ خبریں

ٹاپ اسٹوریز