ویکسین میں نیشنل ازم اچھا نہیں ہے، عالمی ادارہ صحت

ویکسین میں نیشنل ازم اچھا نہیں ہے، عالمی ادارہ صحت

فائل فوٹو

جنیوا: عالمی ادارہ صحت کے ڈائریکٹرجنرل ڈاکٹر ٹیڈروس ادہانوم نے کہا ہے کہ کورونا ویکسین سب کو میسر ہوتو دنیا کی معاشی بحالی میں تیزی آسکتی ہے۔

عالمی رہنماؤں نے کورونا ویکسین کی مفت فراہمی کا مطالبہ کردیا

ہم نیوز کے مطابق انہوں نے خبردار کیا کہ ویکسین میں نیشنل ازم اچھا نہیں ہے۔ انہوں نے کہا کہ اس طرح ہم سب کی مدد نہیں کریں گے۔

عالمی ادارہ صحت کے سربراہ ڈاکٹر ٹیڈروس ادہانوم کا کہنا تھا کہ جب ہم یہ کہتے ہیں کہ یہ سب کے لیے ہےتو یہ پوری دنیا کے فائدے کے لیے ہی ہے۔

ہم نیوز کے مطابق ان کا کہنا تھا کہ ہمیں ایک ساتھ صحت یاب ہونا ہے اور یہ سب کے فائدے کے لیے ہے۔

کورونا ویکسین پہلے کون حاصل کرے گا؟ دعویدار سامنے آگیا

ڈاکٹر ٹیدروس ادہانوم نے کہا کہ اس وقت دنیا کی معیشتیں ایک دوسرے سے جڑ چکی ہیں لہذا دنیا کے صرف چند ممالک ہی محفوظ نہیں رہ سکتے ہیں۔

عالمی ادارہ صحت کے سربراہ نے کہا کہ دیگر ممالک کے ساتھ مل کر انہیں صحتیاب ہونا ہو گا اور اسی لیے ہم کہہ رہے ہیں کہ ویکسین شیئر کی جائے۔

کورونا ویکسین پر امریکہ کا پہلا حق قرار دیے جانے پر فرانسیسی حکومت برہم

ہم نیوز کے مطابق عالمی ادارہ صحت کے سربراہ ڈاکٹر ٹیڈروس ادہانوم نے واضح کیا کہ اگر تمام ممالک مل کر صحتیاب ہوں تو کورونا سے ہونے والا نقصان کم ہو گا۔

متعلقہ خبریں

ٹاپ اسٹوریز