جی بی اسمبلی انتخابات: پیپلزپارٹی کا اسپیکر کی جانب سے بلائے گئے اجلاس کے بائیکاٹ کا فیصلہ

اسلام آباد: پاکستان پیپلزپارٹی نے گلگت بلتستان اسمبلی کے انتخابات سے متعلق اسپیکر قومی اسمبلی کی جانب سے بلائے گئے اجلاس کے بائیکاٹ کا فیصلہ کیا ہے۔

ذرائع کے مطابق پیپلز پارٹی اسپیکر قومی اسمبلی اسد قیصر کی جانب سے بلائے گئے اجلاس میں شرکت نہیں کرے گی۔ اسپیکر قومی اسمبلی کو گلگت بلتستان اسمبلی کے انتخابات پر اجلاس بلانے کا کوئی اختیار حاصل نہیں ہے۔

یاد رہے کہ اسپیکر قومی اسمبلی نے گلگت بلتستان اسمبلی کے انتخابات کے معاملے پر قومی جماعتوں کا اجلاس طلب کر رکھا ہے۔

دوسری جانب پاکستان پیپلز پارٹی نے گلگت بلتستان اسمبلی کی مخصوص نشستوں کے لیے امیدواروں سے درخواستیں طلب کرلی ہیں۔

پیپلز پارٹی رہنما  فرحت اللہ بابر کے مطابق خواتین اور ٹیکنوکریٹ کی مخصوص نشستوں کے لیے 28 ستمبر تک درخواستیں زرداری ہاوَس اسلام آباد کے پتہ پر ارسال کریں۔

فرحت اللہ بابر کے مطابق امیدوار درخواست کے ساتھ 15 ہزار کا پے ڈرافٹ ارسال کریں۔ درخواستیں صدر پیپلزپارٹی پارلیمنٹیرینز کے نام بھیجی جاسکتی ہیں۔ امیدوار
درخواست کی ایک کاپی صوبائی صدر گلگت بلتستان کو بھی بھیجیں۔

خیال رہے کہ گزشتہ روز صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی نے گلگت بلتستان کی اسمبلی کے لیے عام انتخابات کرانے کی منظوری دے دی تھی۔

نمائندہ ہم نیوز کے مطابق گلگت بلتستان اسمبلی کے لیے عام انتخابات 15 نومبر بروز اتوار کو ہوں گے۔ صدر مملکت نے وزیر اعظم عمران خان کی طرف سے بھیجی گئی سمری کی منظوری دے دی تھی۔

اس سے قبل گلگت بلتستان میں عام انتخابات 18 اگست کو ہونے تھے تاہم انہیں ملتوی کر دیا گیا تھا۔ 30 مارچ سپریم کورٹ پاکستان نے گلگت بلتستان میں عام انتخابات کی اجازت دے دی تھی۔

مزید پڑھیں: گلگت بلتستان میں سائنس اینڈ ٹیکنالوجی کے 10 اسکولز بنائیں گے، فواد چودہدری

سپریم کورٹ میں گلگت بلتستان میں عام انتخابات اور نگراں سیٹ اپ کے قیام سے متعلق درخواست کی سماعت کرتے ہوئے گلگت بلتستان آرڈر 2018 میں ترمیم کی اجازت دیتے ہوئے مختصر فیصلہ سنایا گیا تھا۔

واضح رہے کہ گلگت بلتستان کو صوبے کے اختیارات دینا صرف عملی طور پر طے کیا گیا۔ قانونی طور پر ایسا تب تک ممکن نہیں جب تک کشمیر اور گلگت بلتستان کے الحاق سے متعلق رائے شماری نہیں ہو جاتی۔

جی بی آرڈر 2018 کو مقامی افراد کی جانب سے گلگت اپیلٹ کورٹ میں چیلنج کیا گیا تو عدالت نے آرڈر معطل کر دیا لیکن سپریم کورٹ آف پاکستان نے اگست 2018 میں آرڈر 2018 بحال کر دیا تھا۔

رواں ماہ وزیراعظم عمران خان کی زیر صدارت گلگت بلتستان میں تیسرے آئینی انتخابات اور نگران حکومت کے قیام کے حوالے اہم اجلاس بھی ہوا تھا۔

متعلقہ خبریں

ٹاپ اسٹوریز