کورونا کا شکار صدر ٹرمپ حامیوں کا شکریہ ادا کرنے اسپتال سے باہر آگئے

واشنگٹن: کورونا وائرس کا شکار امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ حامیوں کا شکریہ ادا کرنے کے لیے اسپتال سے باہر آ گئے۔

ڈونلڈ ٹرمپ نے گاڑی کے اندر سے ہاتھ ہلا کر شکریہ ادا کیا، بعد ازاں امریکی صدر واپس ملٹری اسپتال چلے گئے۔

قبل ازیں امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے ایک اور ویڈیو بیان جاری کیا جس میں انہوں نے ایک بار پھر ڈاکٹروں، نرسوں اور سکیورٹی حکام کا شکریہ ادا کیا۔

ڈونلڈ ٹرمپ نے پیغام میں کہا کہ انہوں نے کورونا کے بارے میں بہت کچھ سیکھا ہے، کورونا سے متعلق اس طرح سیکھا جیسے اسکول میں سیکھتے ہیں۔

امریکہ کے صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی طبیعت میں مسلسل بہتری آرہی ہے جس کے بعد اس بات کا امکان ہے کہ پیر تک انہیں اسپتال سے فارغ کردیا جائے گا۔ صدر ٹرمپ کو کورونا ٹیسٹ کی رپورٹ مثبت آنے کے بعد اسپتال منتقل کیا گیا تھا۔

یہ بھی پڑھیں: ٹرمپ کی طبیعت میں بہتری، پیر تک اسپتال سے فارغ کیے جانیکا امکان

عالمی خبر رساں ایجنسی کے مطابق صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے معالجین کی ٹیم کا مؤقف ہے کہ انہیں بخار نہیں ہے اور ان کے جگر و گردے بھی معمول کے مطابق کام کر رہے ہیں۔

امریکہ کے 74 سالہ صدر ڈونلڈ ٹرمپ کو طبیعت ناساز ہونے پر جمعہ کے دن والٹر ریڈ ملٹری میڈیکل سنٹر لے جایا گیا تھا۔ خبر رساں ادارے کے مطابق اس وقت صدر امریکہ کی آکسیجن کی سطح پریشان کن حد تک گر رہی تھی۔

یہ بھی پڑھیں: ٹرمپ کے پرسنل اٹنڈینٹ کاکورونا ٹیسٹ مثبت آگیا

صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے معالجین کی ٹیم کا کہنا ہے کہ گزشتہ دنوں میں دو مرتبہ ان کی آکسیجن کی سطح گری ہے اور اسٹیرائیڈز سے ان کا علاج کیا جا رہا ہے لیکن اب کی طبعیت میں خاصا افاقہ ہے۔

متعلقہ خبریں

ٹاپ اسٹوریز