گرفتار ن لیگی رہنما کیپٹن (ر) صفدر کی ضمانت منظور

کراچی: کراچی کی مقامی عدالت نے پاکستان مسلم لیگ نواز کے رہنما کیپٹن ریٹائرڈ صفدر کی ضمانت منظور کرلی۔

جوڈیشل مجسٹریٹ شرقی کی عدالت میں کیپٹن ریٹائرڈ صفدر کے خلاف مزار قائد کی بےحرمتی سے متعلق کیس کی سماعت ہوئی۔ عدالت نے کیپٹن ریٹائرڈ صفدر کو ایک لاکھ روپے کے مچلکے جمع کرانے پر رہا کرنے کا حکم دے دیا۔

سماعت کے دوران عدالت نے کیپٹن صفدر کے وکلا کی جانب سے چیک اور پراپرٹی کاغذات لینے سے انکار کردیا۔ عدالت نے کہا کہ پیپرزکی انکوائری کیلئے وقت درکار ہوگا۔

عدالت میں وکلا نے کیش پیسے جمع کرادیے۔ ایک لاکھ روپے کیش جمع کرانے پرعدالت نے رہائی کے احکامات دے دیے۔

اس سے قبل کراچی سٹی کورٹ میں کیپٹن ریٹائرڈ صفدرکی پیشی کے موقع پر کمرہ عدالت میں شدید بدنظمی پیش آئی۔ عدالت میں پیشی کے وقت مسلم لیگ ن اور تحریک انصاف کے حامی وکلا اور کارکنوں کے درمیان تلخ کلامی ہوئی۔ وکلا اور کارکنوں کی بدنظمی کے باعث جج کمرہ عدالت سے اپنے چیمبر میں چلے گئے۔

آج صبح کراچی پولیس نے  کیپٹن (ر) صفدر کو کراچی کے نجی ہوٹل کے کمرے سے گرفتار کیا تھا۔ کیپٹن صفدر کو مزار قائد تقدس پامالی کیس میں گرفتار کرنے کے بعد عزیز بھٹی تھانے منتقل کر دیا گیا تھا۔

نمائندہ ہم نیوز کے مطابق کیپٹن (ر) صفدر کو کراچی کے نجی ہوٹل کے کمرے سے گرفتار کیا گیا۔ کیپٹن صفدر کو مزار قائد تقدس پامالی کیس میں گرفتار کرنے کے بعد عزیز بھٹی تھانے منتقل کر دیا گیا۔

مسلم لیگ ن کے نائب صدر مریم نواز نے کہا کہ پولیس نے کمرے کا دروازہ توڑ کر کیپٹن (ر) صفدر کو گرفتارکیا جبکہ میں کراچی کے ایک ہوٹل میں قیام کر رہی تھی۔

آج صبح مزار قائد تقدس پامالی کا مقدمہ مسلم لیگ ن کے رہنما کیپٹن (ر) محمد صفدر کے خلاف درج کیا گیا تھا۔ مقدمہ شہری وقاص کی مدعیت میں بریگیڈ تھانے میں درج کیا گیا۔

مقدمہ پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے کارکنان کی جانب سے پولیس اسٹیشن کے باہر احتجاج کے بعد درج کیا گیا جس میں مریم نواز، کیپٹن ریٹائرڈ محمد صفدر سمیت دیگر 200 افراد نامزد ہیں۔

یہ بھی پڑھیں: مریم نواز کی مزار قائد پر حاضری، لیگی کارکنوں کی نعرے بازی پر حکومتی رہنما برس پڑے

مقدمے میں مزار قائد کے تقدس کی پامالی کی دفعات سمیت جان سے مارنے اور ہنگامہ آرائی کی دفعات شامل ہیں۔

گرفتاری کے موقع پر کیپٹن (ر) محمد صفدر کا کہنا تھا کہ میں نے کوئی غلط کام نہیں کیا بلکہ مزار قائد پر صرف مادر ملت اور ووٹ کو عزت دو کا نعرہ لگایا تھا۔

پی ٹی آئی رہنما خرم شیر زمان کا کہنا تھا کہ مزار قائد کی بے حرمتی سے ہر پاکستانی کا دل دکھا ہے اور اس واقعے میں ملوث ملزمان کو جلد گرفتار کیا جائے۔

دریں اثنا کیپٹن صفدر کی عدالت میں پیشی سے قبل مسلم لیگ ن کے کارکن عدالت پہنچ گئے ہیں ۔۔ مسلم لیگ ن کے کارکنوں کے ہمراہ مقامی قیادت بھی موجود ہے ۔

وکلاء کی ٹیم نے کیپٹن صفدر سے وکالت نامے پر دستخط کروا لیے ہیں، سٹی کورٹ  کراچی میں پولیس کی اضافی نفری تعینات کر دی گئی ہے۔

اتوار کی رات کراچی کے بریگیڈ پولیس اسٹیشن میں مریم صفدر اور کیپٹن ریٹائرڈ صفدر سمیت دو سو سے زائد افراد کے خلاف مقدمہ درج کیا  گیا تھا۔

 

متعلقہ خبریں

ٹاپ اسٹوریز