ای سی سی اجلاس: کھاد پر سبسڈی دینے کا اعلان

اسلام آباد: وفاقی حکومت نے کھاد پر سبسڈی دینے کا اعلان کردیا۔ یوریا اور ڈی اے پی کھاد کی بوری پر ایک ایک ہزار روپے سبسڈی دی جائے گی۔

اقتصادی رابطہ کمیٹی (ای سی سی) کی جانب سے جاری اعلامیہ کے مطابق سبسڈی کا 70 فیصد وفاق اور 30 فی صد صوبے دیں گے۔

اعلامیہ کے مطابق مشیرخزانہ عبدالحفیظ شیخ کی زیرصدارت اقتصادی رابطہ کمیٹی کے اجلاس میں  فصلوں کیلئے 23 ارب 86 کروڑ روپے کے وزیراعظم خصوصی پروگرام کی منظوری دے دی گئی۔ خصوصی پیکج کے تحت کسانوں کو کھاد پر ایک ہزار روپے فی بوری سبسڈی دی جائے گی۔

جاری اعلامیہ کے مطابق وفاقی حکومت جڑی بوٹیوں کے تدارک اور کیڑے مار سپرے پر بھی سبسڈی فراہم کرے گی۔ پیکج کی حتمی منظوری وفاقی کابینہ کےآئندہ اجلاس میں دی جائے گی۔

خیال رہے کہ گزشتہ روز اقتصادی رابطہ کمیٹی نے وزارت دفاع کی کوسٹل ایریا کے سروے کیلئے 109.47 ارب کی سپلیمنٹری گرانٹ کی منظوری دے دی تھی۔ پاک فوج کوسٹل ایریا کے سروے کیلئے میری ٹائم افئیرز کی وزارت کی مدد کرے گی۔

گزشتہ روز مشیرخزانہ عبدالحفیظ شیخ کی زیرصدارت ای سی سی اجلاس  میں وزارت میری ٹائم افیئرز کی افغان ٹرانزٹ کارگو کنٹینرز پر چارجز ختم کرنے کی سمری پر غورکیا گیا تھا۔

اقتصادی رابطہ کمیٹی کے اجلاس میں کراچی پورٹ پر پڑے کنٹینرز کی کلیئرنس کیلئے ٹرمینل آپریٹرز سے مزید بات چیت کرنے کی ہدایت کی گئی تھی۔

مزید پڑھیں: ای سی سی اجلاس: صارفین کی ضروریات کیلئے آر ایل این جی فراہمی کی منظوری

اقتصادی رابطہ کمیٹی نے ٹیلی کام سیکٹر کے فروغ کیلئے مختلف ٹیکسز میں چھوٹ کی اصولی منظوری دے دی تھی۔ مشیر ریونیو۔ مشیر اصلاحات اور مشیر تجارت پر مشتمل کمیٹی اس سلسلے میں تجاویز تیار کرے گی۔

اقتصادی رابطہ کمیٹی کے اجلاس میں رحمان گیس فیلڈ کے 3 کنویں سے ایس ایس جی سی ایل کو اضافی گیس کی فراہمی اور ایران کی توانیر کمپنی سے بجلی کی خریداری کیلئے معاہدے کی رینیول کی بھی منظوری دیدی گئی تھی۔

اقتصادی رابطہ کمیٹی اجلاس میں فیصلہ کیا گیا تھا کہ ایران سے 104 میگا واٹ بجلی خریدنے کیلئے معاہدے کی وزارت قانون سے مزید چھان بین پہلے ہوگی۔

متعلقہ خبریں

ٹاپ اسٹوریز