سعودی عرب: ورکرز کو چھٹی پر جانے کیلئے کفیل کی اجازت کی ضرورت نہیں ہوگی

سعودی عرب کا بڑا کارنامہ

فوٹو: فائل

ریاض: سعودی عرب کے وزارت ہیومن ریسورس نے غیرملکی ورکرز کے حقوق کو موثر بنانے کیلئے اصلاحات کے تحت ورکرز کو چھٹی پر جانے کے لیے کفیل کی اجازت کی شرط کو آئندہ سال سے ختم کرنے کا اعلان کیا ہے۔

وزارت ہیومن ریسورس سعودی عرب کے مطابق اصلاحات کے تحت کمپنی سے کنٹریکٹ ختم ہونے پر دوسری کمپنی میں ملازمت کی اجازت ہوگی۔ فیصلے کا اطلاق 14 مارچ 2021 سے ہوگا۔

خیال رہے کہ گزشتہ روز پاکستان سے عمرہ زائرین کی پہلی 2 پروازیں سعودی عرب پہنچ گئی تھیں۔

ہم نیوز کے مطابق قومی ایئر لائن (پی آئی اے) کی پرواز 9713 کے ذریعے46 عمرہ زائرین اسلام آباد سے مدینہ پہنچے تھے جب کہ  دوسری پرواز میں 50 سے زائد عمرہ زائرین جدہ پہنچے تھے۔

مدینہ اور جدہ ایئرپورٹ پر پاکستانی مسافروں کے پی سی آر ٹیسٹ اور ٹمپریچر بھی چیک کیا گیا تھا۔

ذرائع کا کہنا تھا کہ پاکستان سے عمرہ کے لیے جانے والے مسافروں کو تین دن قرنطینہ میں رہنا پڑے گا۔

مزید پڑھیں: کورونا وائرس، عمرہ زائرین کی فیس کی واپسی کیلئے آن لائن سروس کا آغاز

خیال رہے کہ دنیا بھر کے مسلمانوں کو 7 ماہ بعد عمرہ کی ادائیگی کی اجازت مل گئی ہے۔

آج سے بیس ہزارغیرملکی عازمین عمرہ کی ادائیگی کرسکیں گے۔ ساٹھ ہزار نمازی مسجد الحرام میں پنجگانہ نماز ادا کرسکیں گے۔

 

متعلقہ خبریں

ٹاپ اسٹوریز