اپوزیشن کی جلسے مؤخر کرنے کیلئے حکومت کو بڑی پیشکش

اپوزیشن کی جلسے مؤخر کرنے کیلئے حکومت کو بڑی پیشکش

فائل فوٹو


اسلام آباد: اپوزیشن نے جلسے مؤخر کرنے کیلئے حکومت کو بڑی پیشکش کر دی ہے۔

ہم نیوز کے پروگرام ’پاکستان ٹونائٹ‘ میں پیپلزپارٹی کے رہنما مصطفی نواز کھوکھر نے کہا کہ وزیراعظم اپوزیشن کی لیڈر شپ کوآن بورڈ لینے کیلئے نوازشریف اور آصف زرداری کو کال کریں تو جلسے مؤخر کر سکتے ہیں۔

ان کا کہنا تھا اگر حکومت اتنی فکر مند ہے تو وزیراعظم کو چاہیے کہ وہ مولانافضل الرحمان اور دیگر اپوزیشن جماعتوں کے سربراہان سے رابطہ کریں۔

پیپلزپارٹی رہنما کا کہنا تھا کہ اپوزیشن نے ماضی میں ملک کی خاطر مثبت کردار ادا کیا ہے۔ پاک بھارت کشیدگی اور خادم حسین رضوی کے اسلام آباد میں دھرنے کے موقع پر حزب اختلاف نے مثبت کردار ادا کیا تھا۔

انہوں نے کہ ایف اے ٹی ایف کے معاملے پر بھی اپوزیشن نے قومی ذمہ داری ادا کی تھی۔ کیا اب وزیراعظم ایک فون بھی نہیں کر سکتے۔

پروگرام میں شریک پاکستان تحریک انصاف کے رہنما ہمایوں اختر نے کہا کہ حکومت میں انا کا مسئلہ نہیں اپوزیشن انا پرست ہے۔

ہمایوں اختر نے کہا کہ حکومت پاکستان نے عوامی اجتماعات کے متعلق فیصلہ کرلیا ہے۔ اگر اپوزیشن جلسے جلوس کرے گی تو قانون کے مطابق اقدامات کیے جائیں گے۔

مسلم لیگ ن کے رہنما ملک احمد نے کہا حکومت اپوزیشن کے ساتھ کبھی بات نہیں کرے گی۔ وزیراعظم کورونا کے متعلق صرف بیانیہ بنا رہے ہیں، ان کے پاس مؤثر حکمت عملی نہیں ہے۔

متعلقہ خبریں

ٹاپ اسٹوریز