سرفراز اور نسیم شاہ کا کوروناٹیسٹ بھی مثبت، دورہ نیوزی لینڈ پر منسوخی کے سائے


پاکستان کے دورہ نیوزی لینڈ پر منسوخی کے سائے منڈلانے لگے ہیں کیوں کہ نیوزی لینڈ کی حکومت نے پاکستانی ٹیم کو آخری وارننگ دے دی ہے۔

سرفرازاحمد، روحیل نذیز، نسیم شاہ، محمد عباس، عابد علی اور دانش عزیز بھی کورونا سے متاثر ہوئے ہیں۔

نیوزی لینڈ کی حکومت نے کہا ہے کہ آئندہ کورونا ایس او پی کی خلاف ورزی پر پوری ٹیم کو ڈی پورٹ کردیا جائے گا۔

کرکٹ کی مشہور ویب سائٹ کرک انفو نے دعویٰ کیا ہے کہ پاکستانی کرکٹ ٹیم کے کھلاڑی ہوٹل میں آپس میں گھلتے ملتے رہے۔ کھلاڑیوں نے ماسک کا استعمال نہیں کیا۔ ایس او پیز کی خلاف ورزی کرتے ہوئے کھانا بھی شئیر کیا۔

نیوزی لینڈ اتھارٹی نے قومی کرکٹ اسکواڈ کے دوبارہ کورونا ٹیسٹ لے لیے ہیں جس کی رپورٹ کل آئے گی۔کورونا ٹیسٹ منفی آنے کے بعد قومی اسکواڈ 14 روزہ قرنطینہ میں گزارے گی۔

یہ بھی پڑھیں:  قومی اسکواڈ کے6افرادکا کوروناٹیسٹ مثبت آگیا

نیوزی لینڈ اتھارٹی کا کہنا ہے کہ پاکستانی ٹیم کو ٹریننگ کی اجازت متعلقہ ہیلتھ آفیسر سے مشروط ہوگی۔ متاثرہ 6 افراد کے انٹرویو کرلیے گئے ہیں۔

متاثرہ افراد کس کس سے ملے اس بارے میں پوچھ گچھ ہوئی۔ پاکستانی اسکواڈ کی جانب سے تعاون کرنے پر شکرگزار ہے۔

خیال رہے کہ دورہ نیوزی لینڈ پر گئے پاکستان کرکٹ ٹیم کے اسکواڈ میں شامل 6 افراد کا کورونا ٹیسٹ مثبت آگیا ہے۔ نیوزی لینڈ کرکٹ بورڈ نے قومی اسکواڈ کو عارضی طور پر پریکٹس سے روک دیا ہے۔

حکام کا کہنا ہے کہ کورونا پروٹوکولز پر عمل درآمد یقینی بنانا لازمی ہے، ہمارے لیے سب سے اہم عوام کا تحفظ ہے۔

سی ای او پی سی بی وسیم خان نے خبردار کیا کہ ایس او پیز پر عمل نہ کیا تو نیوزی لینڈ حکومت واپس بھی بھیج سکتی ہے۔ اسکواڈ کے تمام اراکین اپنا خیال رکھیں، ہم جانتے ہیں یہ وقت مشکل ہے۔

قومی اسکواڈ کے6افراد میں کورونا کی تشخیص ہونے کے بعد نیوزی لینڈ حکام نے پورے اسکواڈ کے نمونے دوبارہ ٹیسٹ کیلئے بھیجنے کا فیصلہ کیا ہے۔

متعلقہ خبریں

ٹاپ اسٹوریز