پنجاب: ہوٹلز، کیفے، ریسٹورنٹس کے اندر کھانے پر پابندی عائد

لاہور: کورونا وائرس کی دوسری لہر کے پیش نظر پنجاب بھر میں ہوٹلز، کیفے، ریسٹورنٹس کے اندر کھانا کھانے پر پابندی عائد کر دی گئی ہے۔

اس ضمن میں پرائمری اینڈسیکنڈری ہیلتھ ڈیپارٹمنٹ پنجاب نے نوٹیفکیشن جاری کر دیا ہے جس کے مطابق کھانا کھلی جگہ اور کرسیوں کے درمیان مناسب فاصلے پر کھانےکی اجازت ہو گی۔

نوٹیفکیشن کے مطابق ریسٹورنٹس ٹیک اوے کی سروس بھی فراہم کرسکتے ہیں۔

اسلام آباد: کورونا کی دوسری لہر، اِن ڈور کھانوں پر پابندی کا فیصلہ

یاد رہے کہ گزشتہ روز وفاقی دارالحکومت اسلام آباد میں بھی اِن ڈور کھانوں پر پابندی عائد کر دی گئی تھی۔

سماجی رابطوں کی ویب سائٹ ٹوئٹر سے جاری اپنے پیغام میں ڈپٹی کمشنر حمزہ شفقات نے کہا تھا کہ اسلام آباد میں ان ڈور کھانوں پر پابندی عائد کر دی گئی ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ ریسٹورینٹس اور ہوٹلز کو اوپن ایریاز میں کھانوں اور ٹیک اوے سروس کی اجازت ہو گی۔

کورونا وائرس:پاکستان میں شرح اموات2فیصدسے بڑھ گئی

حمزہ شفقات نے کہا کہ تمام اسسٹنٹ کمشنرز اور سب ڈویژنل مجسٹریٹ احکامات پر عمل درآمد یقینی بنانے کے لیے فیلڈ میں موجود ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ مزید کورونا پھیلاؤ روکنے کے لیے ایپڈیمک ڈیزیز ایکٹ کے تحت احکامات جاری کیے گئے۔

متعلقہ خبریں

ٹاپ اسٹوریز