مجھے فخر ہے میں نے قوم کی ایک ایک پائی بچائی، شہباز شریف

مجھے فخر ہے میں نے قوم کی ایک ایک پائی بچائی، شہباز شریف

فائل فوٹو

لاہور: مسلم لیگ ن کے صدر شہباز شریف نے کہا ہے کہ مجھے فخر ہے میں نے قوم کی ایک ایک پائی بچائی۔

احتساب عدالت لاہور میں منی لانڈرنگ کیس کی سماعت ہوئی، شہباز شریف نے اپنی گزارشات پیش کرنے کے لیے عدالت سے وقت مانگا۔

شہباز شریف نے کہا کہ میں عدالت میں کچھ حقائق رکھنا چاہتا ہوں۔ آج کل اخبار جیل میں ملتے ہیں جس میں ویسٹ مینجمنٹ کے حوالے سے پڑھا۔

عدالت نے شہباز شریف سے مکالمہ کرتے ہوئے کہا کہ آپ اس جگہ کو پریس کانفرنس کے لیے استعمال نہ کریں تاہم عدالت کے منع کرنے کے باوجود شہباز شریف بات کرتے رہے۔

مسلم لیگ ن کے صدر نے کہا کہ سال 2010 میں ترکی کی کمپنی کو ویسٹ مینجمنٹ کا ٹھیکہ دیا گیا تھا جو سب سے کم بولی پر دیا گیا۔ میں نے اتفاق سے پوچھ لیا کہ ٹھیکہ کتنے میں ہوا ؟ اس وقت 420 ملین ڈالر پر ٹھیکہ دیا گیا تھا۔

انہوں نے کہا کہ مجھے بتایا گیا کہ آفس کا خرچہ 400 ملین ڈالر بتایا گیا ہے جس پر میں نے کہا خدا کا خوف کریں ہم پاک ترک دوستی کی مثالیں دیتے ہیں اور میں نے ترک حکام کو بتایا کہ خلافت کے لیے ماؤں بہنوں نے اپنے زیور تک دیے جبکہ میں نے پاک ترک دوستی سے متعلق 3 گھنٹے تک بتایا اور 420 ملین ڈالر میں سے 107 ملین ڈالر کم کروائے۔

یہ بھی پڑھیں: شیخوپورہ تا گوجرانوالہ دو رویہ سڑک منصوبے کا سنگ بنیاد رکھ دیا گیا

شہباز شریف نے کہا کہ میں نے اب تک 14 ارب سے زائد کا ڈسکاؤنٹ لیا اور پاک ترک دوستی اور پاک چین دوستی کے لیے کام کیا۔ پاک ترک دوستی یک جان دو قلب ان سے رعایت لی اور اب کہا جا رہا ہے کہ یہ پروجیکٹ بہت مہنگا ہے۔

انہوں نے کہا کہ مجھے فخر ہے میں نے قوم کی ایک ایک پائی بچائی۔ قوموں کو بنانے اور بچانے کے لیے ازہان محنت کرنا پڑتی ہے۔

مسلم لیگ ن پاکستان کے صدر شہباز شریف نے عدالت میں دستاویزات بھی پیش کر دیں۔

متعلقہ خبریں

ٹاپ اسٹوریز