ڈونلڈ ٹرمپ کے عہدِ صدارت کا آج آخری روز

ڈونلڈ ٹرمپ کے عہدِ صدارت کا آج آخری روز ہے، امریکی صدر ٹرمپ کل سابق صدر بن جائیں گے۔ وہ وائٹ ہاوس سے رخصت ہوں گے۔ 

ٹرمپ نے20 جنوری 2017 کو 45 ویں امریکی صدر کا حلف اٹھایا تھا ۔

ان کا دور حکومت تنازعات کا شکار رہا ، دو بار ان کے خلاف مواخذے کی تحاریک  بھی پیش کی گئیں۔

امریکی ایوان نمائندگان: صدر ٹرمپ کے مواخذے کی قرار داد منظور

امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے خلاف تحریک مواخذہ دراصل ڈیموکریٹس نے پارلیمنٹ پر گزشتہ دنوں ہونے والے حملے کے بعد لائی گئی تھی۔ اس حملے کے نتیجے میں پانچ افراد کی موت بھی ہوئی تھی۔

کیپٹل ہل پر ہونے والے حملے کے بعد سے خود متعدد ری پبلکنز نے صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے خلاف آواز اٹھائی تھی۔

امریکی تاریخ میں صدر ڈونلڈ ٹرمپ کو یہ منفرد اعزاز مل گیا ہے کہ ان کے خلاف ایک ہی مدت صدارت میں دو مرتبہ تحریک مواخذہ کی کارروائی کی گئی ہے۔

جوبائیڈن نے ہنگامہ آرائی کو بغاوت قرار دے دیا

مؤقر امریکی اخبار نیو یارک ٹائمز کی رپورٹ کے مطابق سینیٹ کے لیڈر میک کونیل کا کہنا ہے کہ ڈونلڈ ٹرمپ نے تحریک مواخذہ کی کارروائی کے لائق کام کیا ہے۔

میک کونیل کے مطابق صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے خلاف کارروائی لازمی ہونی چاہیے۔ ان کا کہنا ہے کہ امریکہ کو صدر ٹرمپ کے جال سے نکلنا چاہیے۔

امریکی کانگریس نےجوبائیڈن کی کامیابی کی توثیق کردی

امریکہ کے ممتاز ادارے نے گزشتہ روز اپنے انتباہی پیغام میں کہا تھا کہ ملک کی 50 ریاستوں سمیت واشنگٹن میں مسلح ہنگامہ آرائی و شورش کے خطرات موجود ہیں۔

متعلقہ خبریں

ٹاپ اسٹوریز