پی ایچ ڈی کیلئے ایم ایس اور ایم فل کی شرط ختم

آن لائن یا ان کیمپس امتحانات: ایچ ای سی نے فیصلے کا اختیار جامعات کو دے دیا

فوٹو: فائل

اسلام آباد: ہائر ایجوکیشن کمیشن (ایچ ای سی) نے پی ایچ ڈی کے لیے ایم ایس اور ایم فل کی شرط ختم کر دی۔ 

ایچ ای سی کے چیئرمین طارق بنوری نے اس بابت کہا ہے کہ  پی ایچ ڈی میں ایم ایس،ایم فل کی شرط ختم کر دی گئی ہے، طلبا اب بی ایس کے بعد براہ راست پی ایچ ڈی میں داخلہ لے سکتے ہیں۔ 

یہ بھی پڑھیں: ایچ ای سی کا 2 سالہ ڈگری پروگرام ختم کرنے کا اعلان

طارق بنوری کا کہنا تھا کہ طلبا کے لیے پریکٹیکل کے طور پر انٹرنشپ لازمی قرار دی گئی ہے، طلبا اپنے شہر میں رہ کر ان پیڈ انٹرنشپ کریں گے۔ 

انہوں نے کہا کہ ہمیں ڈگری کی ویلیو بڑھنے کی فکر ہے، طلبا کو غیر نصابی سرگرمیوں میں حصہ لینا لازمی ہوگا۔

چیئرمین ایچ ای سی طارق بنوری کا کہنا تھا کہ جنرل ایجوکیشن لینا بھی لازمی ہوگا۔

گزشتہ برس نومبر میں ہائر ایجوکیشن کمیشن (ایچ ای سی) نے 2 سالہ ڈگری پروگرام ختم کرنے کا اعلان کیا تھا۔

ایچ ای سی نے 2018 کے بعد تمام 2 سالہ ڈگریاں غیر قانونی قرار دے دی تھیں اور اعلان کیا گیا تھا کہ اب کسی بھی کالج سے بی اے، بی کام اور بی ایس سی کی ڈگری نہیں ملے گی۔

یہ بھی پڑھیں: بیرون ملک پی ایچ ڈی کیلئے جانے والے طلبہ نے قومی خزانے کو چار ارب روپے کا چونا لگا دیا

ایچ ای سی کے مطابق 2018 میں پابندی کے باوجود غیر قانونی پروگرام کا اجرا تشویشناک ہے اور یونیورسٹیاں فوری طور پر ایسے پروگرامز میں داخلے بند کر دیں کیونکہ ایچ ای سی 31 دسمبر 2018 کے بعد ایسی کسی ڈگری کو تسلیم نہیں کرے گی۔

متعلقہ خبریں

ٹاپ اسٹوریز