شارجہ میں میانداد کے چھکے کے بعد ڈنڈا کس کو لگا؟

شارجہ کے میدان میں بھارت کے خلاف جہاں جاوید میانداد کا آخری گیند پر لگایا گیا یادگار چھکا آج بھی شائیقن کو یاد ہے وہیں اُس میچ سے ایک اور مزے دار قصہ بھی جڑا ہے۔

جاوید میانداد نے جیسے ہی چیتن شرما کو چھکا لگایا تماشائی دوڑتے ہوئے میدان کے اندر داخل ہو گئے جنھیں باہر نکالنے کے لیے سیکیورٹی گارڈز نے ڈنڈوں کا سہار لیا۔

کہا جاتا ہے توصیف احمد، جو بھاگتے بھاگتے گر گئے تھے، وہ بھی ڈنڈے کی زد میں آ گئے تھے۔

جاوید میانداد کے چھکے کی پوری کہانی توصیف احمد کی زبانی

اس حوالے سے توصیف احمد نے ایک انٹرویو میں بتایا کہ جاوید بھائی تو چھکا لگا کر نکل گئے، لیکن میں کسی سے ٹکرا کر گر گیا تھا۔

انہوں نے بتایا کہ ذاکر خان مجھے اٹھانے کے لیے جھکے اور انہیں ہی وہ ڈنڈا لگا تھا۔

ان کا کہنا تھا کہ بہت عرصے بعد ذاکر سے میرا اس حوالے سے ذکر بھی ہوا تھا۔  بہر حال مجھے لوگ اسی طرح پہچان رہے تھے میرے لیے تو خوشی کی بات ہے۔

متعلقہ خبریں

ٹاپ اسٹوریز