15 روپے کے پیچھے عوام کو بھکاری بنا دیا، عدالت برہم

لاہور: لاہور ہائی کورٹ نے برہمی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ 15 روپے کے پیچھے آپ نے عوام کو بھکاری بنا دیا۔

لاہور ہائیکورٹ نے رمضان بازاروں میں چینی کے خرایدروں کی لمبی قطاروں پر برہمی کا اظہار کیا۔ عدالت نے رمضان بازاروں سے کل تک چینی کے خریداروں کی لگی لائنیں ختم کرنے کا حکم دے دیا۔

عدالت نے رمضان بازاروں میں چینی کے خریداروں کی لائنوں سے متعلق کل تک رپورٹ بھی طلب کر لی۔ عدالت نے سرکاری وکیل سے استفسار کیا کہ حکومت نے جو کہا وہی قیمت مقرر کروا دی ؟ چینی کی دکانوں پر لوگوں کی لائنیں کیوں لگوائی جا رہی ہیں؟ عام خریدار کو 85 روپے قیمت پر چینی کیوں نہیں مل رہی ؟

عدالت نے سرکاری وکیل سے مکالمہ کرتے ہوئے کہا کہ میڈیا پر خبریں آپ کے بیان سے مختلف ہیں۔ اگر بات مختلف ہوئی تو آپ کے خلاف توہین عدالت کی کارروائی کریں گے۔

یہ بھی پڑھیں: مذاکرات ہی کرنے تھے تو کالعدم قرار کیوں دیا، شاہد خاقان عباسی

عدالت نے ریمارکس دیے کہ 15 روپے کے پیچھے آپ نے عوام کو بھکاری بنا دیا ہے۔ رمضان بازاروں میں چینی کی خریداری کے لیے لمبی لمبی لائنیں نہیں لگنی چاہیئیں۔

عدالت نے کہا کہ یہاں عدالت میں حلف نامہ جمع کروائیں کہ لائنیں نہیں لگیں گی۔ انسانی حقوق کی خلاف ورزی ہورہی ہے اور اگر انسانی وقار متاثر کرنا ہے تو کسی کے گھر کے باہر سے چینی لینے دیں۔

کین کمشنر، ڈی جی انڈسٹری سمیت دیگر افسران عدالت میں پیش ہوئے۔

متعلقہ خبریں

ٹاپ اسٹوریز