یورپی پارلیمنٹ میں توہین رسالتﷺ قوانین سے متعلق قرارداد پر مایوسی ہوئی، پاکستان

یورپی پارلیمنٹ میں توہین رسالتﷺ قوانین سے متعلق قرارداد پر مایوسی ہوئی، پاکستان

فائل: فوٹو

پاکستان نے کہا ہے کہ یورپی پارلیمنٹ میں ملک میں رائج توہین رسالتﷺ سے متعلق قوانین کے حوالے سے قرارداد پر مایوسی ہوئی۔

ترجمان دفترخارجہ کے مطابق  پاکستان کےعدالتی نظام اور قوانین سے متعلق غیر ضروری تبصرہ قابل افسوس ہے۔ پاکستان میں پارلیمانی جمہوریت، فعال سول سوسائٹی، آزاد میڈیا اور خودمختارعدلیہ موجود ہے۔

ترجمان کے مطابق پاکستان میں تمام شہریوں کے بلاامتیاز انسانی حقوق کے تحفظ اور فروغ کیلئے پرعزم ہیں۔ اپنی اقلیتوں پر فخر ہے جن کو پاکستان میں مساوی حقوق حاصل ہیں۔

مزید پڑھیں: توہین رسالت کیخلاف بین الاقوامی کنونشن پاس کرائیں گے، وزیراعظم

ترجمان دفتر خارجہ زاہد حفیظ  نے کہا ہے کہ پاکستان میں اقلیتوں کو آئین کے مطابق ان کی بنیادی آزادیوں کا مکمل تحفظ ہے۔ انسانی حقوق کی خلاف ورزی کی صورت میں عدالتی وانتظامی میکانزم موجود ہے۔

ترجمان کے مطابق پاکستان نے تحمل اور بین المذاہب ہم آہنگی کے پرچار میں اہم کردار ادا کیا ہے۔ پرامن بقائے باہمی کیلئے کام کرنے کی ضرورت ہے۔

ترجمان دفترخارجہ نے کہا ہے کہ پاکستان اور یورپی یونین میں دو طرفہ تعلقات کے تمام پہلوؤں پر بات چیت کیلئے کئی میکانزم ہیں۔ جمہوریت، قانون کی حکمرانی، گورننس اور انسانی حقوق پربات ہوسکتی ہے۔ باہمی دلچسپی کے امور پر یورپی یونین سے مثبت روابط جاری رکھیں گے۔

 

متعلقہ خبریں