ڈرون آپریشن: پاکستان کا امریکہ کو اڈے دینے سے صاف انکار

ڈرون آپریشن: پاکستان کا امریکہ کو اڈے دینے سے صاف انکار

پاکستان نے امریکا کو پاکستان میں ڈرون آپریشن کے لیے اڈے دینے سے سختی سے انکار کیا ہے۔

ذرائع کے مطابق  پاکستان نے امریکا پر دوٹوک انداز  میں واضح کیا ہے کہ ایئر بیس دینے کا معاملہ ناممکن ہے۔

6 جون کو نیویارک ٹائمز میں چھپنے والے آرٹیکل میں دعویٰ کیا گیا تھا کہ امریکی خفیہ ادارے (سی آئی اے) کے سربراہ ولیم برنس نے پاکستان کا خفیہ دورہ کیا  اور پاکستان ممکنہ طور پر امریکا کو افغانستان میں مستقبل کے آپریشنز کیلئے فضائی اڈہ یا اڈے دے سکتا ہے۔

مزید پڑھیں: امریکہ کو اڈے دیکر حکومت نے ملکی خودمختاری کو داؤ پر لگا دیا، مریم نواز

پاکستان کے وزیرخارجہ سمیت اعلیٰ حکام نے اس خبرکی سختی سے تردید کی ہے۔

روزنامہ ڈان کے مطابق سرکاری حکام نے نجی طور پر سی آئی اے کے سربراہ کے دورے کی تصدیق کی ہے تاہم بتایا ہے کہ ان ملاقاتوں میں اعلیٰ حکام کی جانب سے سی آئی اے ڈائریکٹر کو واضح کیا گیا کہ پاکستان اپنی سرزمین کے اندر کسی خفیہ ڈرون کو آپریٹ کرنے کی اجازت نہیں دے سکتا۔

متعلقہ خبریں

ٹاپ اسٹوریز