دنیا کے سمندروں میں ایک اور سمندر کا اضافہ

اب تک دنیا بھر میں 4 سمندر بحر ہند، بحر اوقیانوس، بحر الکاہل اور آرکٹک اوشین تھے، جن کی مختلف شاخیں دنیا بھر میں موجود ہیں۔

گزشتہ صدی سے نیشنل جیوگرافک دنیا کے سمندروں کا نققشہ بنانے کی ذمہ داری سنبھالے ہوئے ہے اور اب پہلی بار اس نے سمندروں کے نئے حصے کو نقشے میں الگ کیا ہے۔

نیشنل جیوگرافک نے باضابطہ طور پر “بحیرہ منجمد جنوبی” کو زمین کا 5 واں سمندر قرار دینے کا اعلان کیا ہے۔


ماہرین کا کہنا ہے کہ بحیرہ منجمد جنوبی میں حیران کن حد تک تیز بحری کرنٹ موجود ہے جو اسے شمالی سمندروں کے پانیوں سے الگ کرتا ہے۔ اس کرنٹ کا بہاؤ تیز اور مغرب سے مشرق میں انٹارکٹیکا کے ارگرد حرکت کرتا ہے۔

محققین کے مطابق اپنی سرحد کے اندر اس سمندر کا پانی کم نمکین اور زیادہ ٹھنڈا ہے، جس کی بدولت انٹارکٹیکا کا درجہ حرارت مخصوص سطح تک برقرار رہتا ہے۔

جغرافیہ کی تعلیم میں نئی راہوں کو ہموار کرنے والا نیا بحیرہ منجمد جنوبی موسمیاتی تبدیلیوں کے خلاف جنگ میں بھی اہم کردار ادا کر سکتا ہے۔ جس کے لیے سائنسدانوں کو مزید تحقیق کی ضرورت ہو گی۔

 

 

 

متعلقہ خبریں

ٹاپ اسٹوریز