بھارت کا پہلی بار افغان طالبان کے رہنماؤں سے رابطہ

بھارت کا پہلی بار افغان طالبان کے رہنماؤں سے رابطہ

کابل: بھارت نے پہلی بار افغان طالبان کے رہنماؤں سے رابطہ کر لیا۔

افغان میڈیا کے مطابق افغان طالبان سے بات چیت نہ کرنے کے حوالے سے نئی دہلی کی پالیسی میں بڑی تبدیلی دیکھنے میں آئی ہے اور بھارت نے افغان طالبان سے بات چیت کے لیے مختلف ذرائع استعمال کیے۔

بھارتی سیکیورٹی حکام نے گزشتہ چند ماہ میں نیشنلسٹ سمجھے جانے والے اور پاکستان ایران کے زیراثر نہ رہنے والے طالبان گروپوں سے رابطے کیے ہیں۔

افغان میڈیا نے دعویٰ کیا ہے کہ رابطوں کا یہ سلسلہ گزشتہ چند ماہ سے جاری ہے۔ جس میں ایک دوسرے کو پیغامات بھیجے گئے ہیں لیکن باضابطہ ملاقات کی تصدیق نہیں ہوسکی۔

پورٹ کے مطابق بھارت کی جانب سے افغان طالبان کے ڈپٹی لیڈر ملا برادر سے بات چیت کی گئی ہے جبکہ حقانی نیٹ ورک اور کوئٹہ شوریٰ سے رابطہ نہیں کیا گیا۔

یہ بھی پڑھیں: افغانستان: بارودی سرنگیں ناکارہ بنانیوالے درجنوں کارکنان قتل

بھارتی میڈیا کے مطابق کچھ افراد نے بھارت کی اس کوشش کو سراہا ہے اور کہا ہے کہ بھارت کا طالبان رہنماؤں سے رابطہ کرنا مثبت کوشش ہے جس کے اچھے نتائج برآمد ہوں گے۔

واضح رہے کہ بھارت کی جانب سے اب تک طالبان رہنماؤں سے ملاقات کی کوئی خبر سامنے نہیں آئی ہے۔

متعلقہ خبریں

ٹاپ اسٹوریز