بجٹ 2021-22 : چھوٹی گاڑیاں سستی

نئے مالی سال 2021-22 کے بجٹ میں  مقامی طورپر تیار ہونے والی 850 سی سی تک گاڑیوں پر فیڈ رل ایکسائز ڈیوٹی پر چھوٹ کی تجویزدے دی گئی۔

ہم نیوز کے مطابق وفاقی وزیر خزانہ شوکت ترین 8 ہزار ارب روپے حجم  بجٹ  پیش کیا گیا۔

بجٹ تقریر کے دوران انہوں نے کہا کہ برآمد کی جانے والی 850 سی سی تک کی گاڑیوں پر کسٹم اور ریگولیٹری ڈیوٹی پر چھوٹ دے رہے ہیں۔ سیلز ٹیکس بھی 17 فیصد سے کم کر کے ساڑھے بارہ فیصد کردیا گیا ۔

انہوں نے کہا کہ پہلے سے بننے والی گاڑیوں اور نئے ماڈل بنانے والوں کو ایڈوانس کسٹم ڈیوٹی سے استثنی دیا جارہا ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ بجٹ میں مقامی سطح پر تیار ہونے والی ہیوی موٹرسائیکل ، ٹرک اور ٹریکٹر کی مخصوص اقسام پر ٹیکسوں کی کمی کی تجویز ہے ۔

اس کے علاوہ بجلی سے چلنے والی گاڑیوں کے لیے ایک سال تک کسٹم ڈیوٹی کم کی جا رہی ہے ۔

 

 

متعلقہ خبریں

ٹاپ اسٹوریز