کنٹرولر امتحانات کے بیٹے کو نقل کرانے پر عملے کو شو کاز نوٹس

پی ٹی آئی ایم پی اے پر امتحان میں نقل کرنے کا مقدمہ درج

فائل فوٹو

میٹرک کے سالانہ امتحان میں کنٹرولر مالاکنڈ بورڈ کے بیٹے کو نقل کرانے میں سہولت فراہم کرنے پر وزیر اعلیٰ ٰخیبر پختونخوا محمود خان نے نوٹس لیتے ہوئے امتحانی عملے کو شو کاز نوٹس جاری کردیا ہے۔

ذرائع کے مطابق کنٹرولر مالاکنڈ بورڈ کے بیٹے کو نقل کرانے میں مدد فراہم کرنے والے عملے میں ایگزامینشن سینٹر کے سپرنٹنڈنٹ اور نگران علیٰ شامل ہیں۔

وزیراعلیٰ خیبر پختونخواہ کی جانب سے جاری شوکاز نوٹس میں امتحانی عملے کو فرائض سے غفلت اور سروس ڈسپلن کی خلاف ورزی کا مرتکب ٹھہرایا گیا ہے۔

مزید پڑھیں: پی ٹی آئی کے رکن اسمبلی پر امتحان میں نقل کرنے کا کیس

جاری شوکاز نوٹس میں دونوں امتحانی عملے کو 15 دن کے اندر اندر تسلی بخش جواب دینے کی ہدایت کردی گئی ہے۔

ذرائع کے مطابق وزیر اعلیٰ محمود خان  کی ہدایت پر کنٹرولر مالاکنڈ بورڈ کو پہلے ہی سے عہدے سے ہٹا کر ایف آئی آر درج کی گئی ہے۔

دریں اثناء وزیراعلیٰ محمود خان نے ایک بیان میں کہا ہے کہ امتحانی ہال میں عملے کی سرپرستی میں امیدوار کو نقل کروانے کا معاملہ انتہائی شرمناک ہے۔ واقعے سے محکمہ تعلیم اور صوبائی حکومت کی بدنامی ہوئی ہے۔

متعلقہ خبریں

ٹاپ اسٹوریز